جمعرات , 23 مئی 2019

’’پاک بھارت میچ کی اجازت نہیں دیں گے‘‘، شیوسینا کی دستی بم حملےکی دھمکی

424859-ShivSenaWeb-1451793346-429-640x480

اسلام آباد (مانیٹرنگ رپورٹ) بھارتی انتہا پسند جماعت شیوسینا نے پاک بھارت میچ رکوانے کیلئے دستی بم حملے اور پھر پچ کھودنے کی دھمکی دیدی، بھارتی حکمران جماعت بے جے پی نے شیوسینا کی حمایت کر دی۔ انتہا پسندوں کی دھمکیوں کے بعد پاکستانی کرکٹ ٹیم کی سکیورٹی میں غیرمعمولی اضافہ کر دیا گیا۔ تفصیلات کے مطابق دھرم شالہ میں پاکستان بھارت ٹی ٹونٹی مقابلہ منسوخ کرانے کے بعد ہندو انتہا پسند رہنما اب کولکتہ میں شیڈول مقابلہ رکوانے کے لئے بم پھینکنے کی دھمکیاںدینے لگے ہیں۔ ہندو انتہا پسند تنظیم شیوسینا کے سربراہ اودے ٹھاکرے نے بھارتی ریاست مہاراشٹرا کے شہر چندرا پور میں شیوسینا کے کارکنوں سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ہماری ٹیم کو پاکستان کے ساتھ میچ کھیلنے کی اجازت نہیں ہونی چاہئے کیونکہ بارڈرز پر بمباری ہو رہی ہے، بم اور کرکٹ ایک ساتھ نہیں ہو سکتے۔ ہم بھی پاکستانی ٹیم پر بال کی بجائے بم پھینکیں گے۔ وہ دھرم شالہ میں پاکستان بھارت میچ نہ ہونے دینے پر ہماچل پردیش کے وزیراعلیٰ کو شاباشی پیش کرتے ہیں اور کولکتہ میں شیڈول مقابلے پر ان کا بھارتی حکومت سے سوال ہے کہ آخر پاکستان سے کھیلنے کی ضرورت کیا ہے؟ انتہا پسند ہندوئوں نے پھر دھمکی دی ہے کہ وہ کولکتہ میں بھی میچ نہیں ہونے دیں گے اور اگر ایسی کوشش کی گئی تو میچ سے قبل ایڈن گارڈن کی پچ کھود دیں گے۔انتہا پسند ہندو جماعت اے ٹی آئی ایف کا کہنا ہے کہ بھارت میں کسی صورت پاکستان کو میچ نہیں کھیلنے دیں گے کیونکہ پاکستان کی میزبانی کرنے سے بھارتی فوج اور حکومت کی بے عزتی ہو گی۔

یہ بھی دیکھیں

نواسۂ رسول حضرت امام حسن مجتبی (ع) کی ولادت باسعادت

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)نواسہ رسول حضرت امام حسن مجتبی علیہ السلام کے یوم ولادت باسعادت کا …