جمعرات , 24 اکتوبر 2019

بحرینی حکام اپنے پیروں پر مزید کلھاڑی نہ ماریں: آیت اللہ مکارم شیرازی

قم (مانیٹرنگ ڈیسک) سنئیر ایرانی دینی رہنما نے نامور بحرینی شیعہ رہنما آیت اللہ شیخ عیسی قاسم کے گھر پر حملے کی شدید مذمت کرتے ہوئے بحرینی حکام کو مخطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ وقت گزرنے سے پہلے بحرینی شیعوں کے جائز مطالبات کو منظور کریں اور اپنے پیروں پر مزید کلھاڑی مارنے سے باز آئیں۔

آیت اللہ ‘ناصر مکارم شیرازی’ نے ہفتہ کے روز اپنے ایک بیان میں مزید کہا کہ بحرینی جابر حکمرانوں نے ایک بار پھر امریکی اشارے اور سعودی پشت پناہی کے ساتھ ملک میں بربریت کی نئی لہر پیدا کی ہے.

انہوں نے مزید کہا کہ آل خلیفہ کی ظالم فورسز نے نہتے بحرینی عوام، نوجوانوں پر تشدد کرکے بالخصوص آیت اللہ شیخ عیسی قاسم کی بے حرتمی اور ان کی رہائشگاپ پر حملہ کرک ے اپنے ناپاک دامن پر ایک اور سیاہ نقطہ ریکارڈ کر دیا.

آیت اللہ مکارم شیرازی نے مزید کہا کہ آل خلیفہ اس بات سے غافل ہے کہ وہ امریکہ اور سعودی عرب کے اشاروں پر چل کر با الاخر صدام جیسے انجام کا شکار ہو گی.

یاد رہے کہ بحرین کی آل خلیفہ حکومت کی فوج اور سیکورٹی اہلکاروں نے گزشتہ دنوں منامہ کے علاقے الدراز میں مظاہرین پر حملہ کر کے متعدد شہریوں کو شہید اور زخمی کر دیا ہے جبکہ آیت اللہ شیخ عیسی قاسم کو ان کو گھرمیں نظر بند کر دیا گیا ہے.

اس سے پہلے بحرین کی ایک نام نہاد عدالت نے آیت اللہ شیخ عیسی قاسم کو ایک سال قید کی سزا سنائی تھی جس کے بعد عوامی مظاہروں میں پرجوش شدت آ گئی.

گذشتہ جون میں آیت اللہ شیخ عیسی قاسم کی شہریت منسوخ کر دئے جانے کے بعد سے بڑی تعداد میں بحرینی شہری الدراز کے علاقے میں ان کے گھر کے باہر ان کی حمایت میں دھرنے پر بیٹھے ہوئے ہیں.

یہ بھی دیکھیں

مسئلہ کشمیراقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق حل ہونا چاہیے: ملائیشین وزیراعظم

کوالا لمپور: ملائیشیا کے وزیراعظم کا کہنا ہے کہ ہندوستان کے زیر انتظام کشمیر سے …