ہفتہ , 14 دسمبر 2019

قبلہ اول داخلے پر پابندی،ترک صدر کا اسرائیلی ہم منصب سے رابطہ

انقرہ(مانیٹرنگ ڈیسک) ترک صدر رجب طیب اردوان نے مسجد اقصیٰ میں مسلمانوں کے داخلے پر پابندی کے بارے میں اسرائیلی صدر رایو وان ریولین سے ٹیلیفون پر بات چیت کی ۔ غیر ملکی میڈیا کے مطابق ترک صدارتی ذرائع کا کہنا ہے کہ اس بات چیت میں قبلہ اول میں مسلمانوں کا داخلہ بند کرنے پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا گیا کہ یہ پابندی ناقابل قبول ہے اور ہمارا حکومت اسرائیل سے مطالبہ ہے کہ وہ مذہبی مقامات کے تقدس اور ان کی اہمیت کا خیال رکھتے ہوئے فوری طور پر مسجد اقصیٰ میں داخلے کی پابندی ختم کرے ۔

صدر نے کہا کہ قبلہ اول امت مسلمہ کیلئے مقدس مانا جاتا ہے جہاں صیہونی فوجیوں کا تلاشی کیلئے برقی آلات کا استعمال قابل مذمت ہے ۔ اس کے جواب میں اسرائیلی صدر نے کہا کہ یہ تدابیر حفاظتی نوعیت کی ہیں اور مسلم امہ اطمینان رکھے ،مسجد اقصیٰ کی حیثیت برقرار رکھتے ہوئے مسلمانوں کی دینی آزادی کا پورا احترام کیا جائے گا۔

یہ بھی دیکھیں

لیبی فوج نے مصراتہ میں ترکی کا اسلحہ گودام تباہ کردیا

لیبیا کی قومی فوج کی طرف سے جاری کردہ ایک بیان میں کہا گیا ہے …