بدھ , 15 جولائی 2020

سعودی حکومت عوامیہ کے تاریخی محلوں کو مسمار نہ کرے،اقوام متحدہ

نیویارک (مانیٹرنگ ڈیسک) اقوام متحدہ نے سعودی حکومت سے کہا ہے کہ ملک کے مشرقی حصے میں واقع عوامیہ شہر کے تاریخی محلوں اور رہائشی بستیوں کو مسمار نہ کیا جائے۔

سعودی حکام کا کہنا ہے کہ یہ علاقے بہت تنگ ہیں۔ وہاں سے رفت و آمد دشوار ہے اور سعودی حکومت کے خلاف برسرپیکار افراد کی پناہ گاہیں بن چکے ہیں۔ یہی وجہ ہے کہ انہیں مسمار کیا جا رہا ہے۔ جبکہ اقوام متحدہ کے تحقیقاتی مشن کا کہنا ہے کہ سعودی حکام یک طرفہ کارروائی کر رہے ہیں اور سارے علاقے کو محاصرے میں لے رکھا ہے۔ جس سے علاقہ مکینوں میں خوف و ہراس پایا جاتا ہے۔ علاقہ مکین جوکہ زیادہ تر شیعہ مسلک سے تعلق رکھتے ہیں، زندگی کی بنیادی سہولیات سے بھی محروم کر دیے گئے ہیں۔

اقوام متحدہ کے تحقیقاتی مشن نے اس تشویشناک صورتحال پر اعتراض کرتے ہوئے محاصرہ ختم کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔ مشن کا کہنا ہے کہ عوامیہ کے تاریخی محلوں میں تخریبی کاموں کو فوراً روک دیا جائے۔

یہ بھی دیکھیں

الحشد الشعبی نے مشرقی عراق میں داعش کے 10 خفیہ ٹھکانوں کو تباہ کردیئے۔

بغداد: عراق کی مقبول موبلائزیشن یونٹس (پی ایم یو) ، جسے الحشد الشعبی کے نام …