جمعہ , 26 فروری 2021

عمار حکیم اور مقتدیٰ صدر نے ترک فوج کے عراق سے فوری نکلنے پر زور دیا

عراق کی مجلس اعلائے اسلامی اور صدر گروپ کے سربراہوں نے عراق سے ترک فوج کے فوری نکل جانے پر تاکید کی ہے۔

24

عراق کی مجلس اعلائے اسلامی کے سربراہ سید عمار حکیم اور صدر گروپ کے سربراہ مقتدی صدر نے نجف اشرف میں ملاقات کی ہے۔ اس ملاقات میں دونوں رہنماؤں نے ملک کی سیکورٹی اور سیاسی صورتحال سے متعلق مسائل کا جائزہ لیا، خاص طور پر عراق کے خلاف ترکی کی جارحیت کے بارے میں تبادلہ خیال کیا-

سید عمار حکیم اور مقتدی صدر نے عراق کی حاکمیت اور اقتدار اعلی کے احترام کی ضرورت پر تاکید کرتے ہوئے کہا کہ عراق سے ترکی کی فوج کو باہر نکالنے کے لئے تمام تر سفارتی اور قانونی اقدامات انجام پانا ضروری ہیں۔ عراق کی مجلس اعلائے اسلامی اور صدر گروپ کے سربراہوں نے ملک میں اتحاد و یکجہتی اور حکومت عراق کے اصلاحاتی پیکج پر عملدرآمد اور موجودہ حالات میں اس سے استفادے پر تاکید کی۔

واضح رہے کہ چار دسمبر کو ترکی کے سیکڑوں فوجی، عراق کی ارضی سالمیت کی کھلی خلاف ورزی کرتے ہوئے، شہر موصل کے نزدیک داعش دہشت گرد گروہ کے زیر قبضہ علاقوں میں اپنے ٹینکوں کے ساتھ تعینات ہو گئے تھے- ترکی کی اس جارحیت کے خلاف عراق کی حکومت کے احتجاج اور عراقی عوام کے وسیع مظاہروں اور مذہبی شخصیات کے ردعمل کے باوجود ترکی کے حکام کا کہنا ہے کہ وہ شمالی عراق کے صوبہ نینوا کے شہر موصل میں اپنی فوجی موجودگی کو مستحکم کرنا چاہتے ہیں۔

یہ بھی دیکھیں

شہید قاسم سلیمانی کے قتل کا جواب امریکہ کو دینا ہو گا: ایران

مجید تخت روانچی نے ایران اور امریکہ کے مابین قیدیوں کے تبادلے کے سوال پر …