پیر , 25 ستمبر 2017

محمد بن سلمان یہاں تک کیسے پہنچے

(تسنیم خیالیؔ)
سعودی ولی عہد اور بہت جلد سعودی بادشاہ بننے والے شہزادہ محمد بن سلمان نے یہاں تک پہنچنے کیلئے بہت کچھ کیا، اہم اقدامات اٹھائے اور طرح طرھ کی کھچڑیاں پکائی اور ثابت کیا کہ وہ اپنے شاطر اور چالباز دادا(عبدالعزیز آل سعود )کے ہی پوتے ہیں۔بہت سے لوگوں کو بعض اوقات یقین نہیں آتا کہ بن سلمان جس کی عمر 35سال بھی نہیں سعودی عرب کے اگلے بادشاہ بننے جارہے ہیں ،خود آل سعود خاندان کے نصف شہزادے اس بات کو سمجھنے سے قاصرہیں ۔لہٰذا سوال تو بنتا ہے کہ بن سلمان یہاں تک کیسے پہنچ گئے؟

نمبر۱: شاہ سلمان کے اقتدار میں آنے کے بعد محمد بن سلمان نے سب سے پہلے اپنے والد پر اثر و رسوخ قائم کیا جس کی وجہ سے بن سلمان ہی عملی حکمران بن بیٹھے۔

نمبر۲: بن سلمان نے ایک سکیورٹی کونسل اور دوسری اقتصادی کونسل تشکیل دی جن کے ذریعے بن سلمان سعودی عرب کے سکیورٹی اور اقتصادی معاملات سےمربوط ہوگئے ۔

نمبر۳: بن سلمان نے سعودی عرب میں قائم بڑی اور اہم کمپنیوں کو بند کرانیکا کام شروع کیا ،بن لادن کمپنی اور سعودی اوجیہ کمپنی جوکہ بن سلمان کی کمپنیوں کی حریف تھیں،بالآخر کمپنیاں بندہوئی اور بن سلمان کی کمپنیوں نے ان کی جگہ لے لی۔

نمبر۴: بن سلمان نے آہستہ آہستہ سابق ولی عہد محمد بن نایف کے اہم ساتھیوں اور حماتیوں کو ان کے ذمہ داریوں اور عہدوں سے برخواست کروایا جسکی وجہ سے بن نایف کمزور ہونا شروع ہوگئے۔

نمبر۵: بن سلمان نے اپنی تشہیر اور مشہوری کیلئے میڈیا کا بھرپور استعمال کیا جس نے بن سلمان کو یوں پیش کیا کہ ’’جو محمد بن سلمان کر رہے ہیں ہیں ویسا کسی سعودی فرمانروانے نہیں کیا‘‘۔

نمبر۶: بن سلمان نے سینکڑوں ارب ڈالرز کے ذریعے مغربی ممالک کی حمایت خریدلی جیسا کہ ٹرمپ جو صرف بن سلمان کے گن گاتے ہیں۔

نمبر۷: بن سلمان نے سعودی عرب میں سر گرم نامور صحافی،ادباء،مصنفین اور علماء دین کےضمیرخریدے جنہوں نے بن سلمان کو مسیحا کی طرح پیش کیا اور ان حضرات میں سے جو کوئی ایسا نہیں کرتا وہ غائب ہوجاتا تھا۔

نمبر۸: بن سلمان نے اسرائیل کے ساتھ خفیہ تعلقات کا آغاز کیا اور اسرائیل سے قربت اختیار کی ۔

نمبر۹: بن سلمان نے بہت بڑی مقدار میں دولت بنائی،اس دولت سے بن سلمان نے ملک کی سرکاری کمپنیوں کوپرائیویٹائز کیا اور انکےشیئرز مارکیٹ میں فروخت کیلئے پیش کردیے مثال کے طور پر سعودی عرب کی سب سے بڑی کمپنی ’’ارامکو‘‘۔

نمبر ۱۰: بن سلمان نے اُن سعودی سکیورٹی اداروں کو کمزور کیا جوان کے ماتحت نہیں تھے،اپنے والد کے ذریعے بن سلمان نے اداروں کے آہستہ آہستہ اختیار کم کردیے اور دیگر ادارے بنائے۔

نمبر ۱۱: بن سلمان نے آل سعود کے نوجوان شہزادوں کی حمایت اور وفاداری خریدی،یہی نہیں بلکہ متعدد کو اہم عہدوں پر فائز کیا۔

نمبر۱۲: بن سلمان نے سابق ولی عہد محمد بن نایف کو خاموشی سے اپنےوالد کے ذریعے برطرف کروایا اور خودکو ولی عہد مقرر کروایا۔

نمبر۱۳: بن سلمان نے ولی عہد بننے کے بعد ان کی مخالفت کرنیوالے آل سعود کے بہت سےشہزادے ،علماء دین اور بن نایف کے وفادار ساتھیوں کو گرفتار کرایا،کسی نظر بند کیا اور کسی کو موت کے گھاٹ اُتار ا اور یہ سلسلہ ہنوز جاری ہے۔

یہ بھی دیکھیں

شمالی کوریا کی سرحد کے قریب امریکی جنگی طیاروں کی پروازیں

پیانگ یانگ (مانیٹرنگ ڈیسک) شمالی کوریا پر جنگ کے بادل منڈلانے لگے اور سرحدی علاقوں ...

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے