پیر , 25 ستمبر 2017

روہنگیا مسلمان قومی سلامتی کیلئے خطرہ ہیں،بھارت کی شر انگیزی

نئی دہلی (مانیٹرنگ ڈیسک) بھارت نے میانمار میں آنگ سان سوچی کی حکومت کے مظالم کا شکار روہنگیا مسلمانوں کو اپنی قومی سلامتی کیلئے خطرہ قرار دیدیا۔ جموں کشمیر میں پریس کانفرنس کے دوران وزیر داخلہ راجناتھ سنگھ کا کہنا تھا کہ ان غیر ملکی اور غیر قانونی مہاجرین کے معاملے سے سختی کیساتھ نمٹا جائیگا۔

انہوں نے کہا کہ روہنگیا مسلمان بھارت میں غیر قانونی طور پر مقیم ہیں، اس لیے حکومت نے ان کیخلاف سخت رویہ اختیار کیا ہوا ہے ، کیونکہ وہ ملک کی سیکیورٹی کیلئے خطرہ بن سکتے ہیں۔ یادرہے کہ بھارت میں 40 ہزار روہنگیا مسلمان مقیم ہیں جنہیں بیدخل کرنے کی تیاریاں کی جا رہی ہیں۔

یہ بھی دیکھیں

جنرل اسمبلی:سشما سوراج کے خطاب کے دوران کشمیریوں ،سکھوں کا احتجاج

نیو یارک(مانیٹرنگ ڈیسک)بھارتی وزیرخارجہ کے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے 72 ویں سالانہ اجلاس ...

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے