پیر , 25 ستمبر 2017

شہزادہ عبدالعزیز بن فہد آل سعود کی گرفتاری کیسے ہوئی؟

(تسنیم خیالیؔ)
آل سعود سے بغاوت کرنیوالے سعودی شہزادےفارس بن سعود آل سعود نے سابق سعودی فرمانروا شاہ فہد کے بیٹے شہزادہ عبدالعزیز کی گرفتار ی کے حوالے سے اپنے ٹوئیٹر اکائونٹ پر تہلکہ خیز انکشاف کرتے ہوئے کہا ہے کہ عبدالعزیز بن فہد کی گرفتاری کے پیچھے سعودی ولی عہد محمد بن سلمان کا ہاتھ ہے اور شہزادہ عبدالعزیز کو اسپین سے بھلا پھسلا کر حج کے بہانے سعودی عرب لایاگیا۔

فارس کے مطابق عبدالعزیز بن فہد اسپین کے ایک جزیرے میں مقیم تھے اور مراکش کے شہر طنجہ میں اپنی چھٹی گزارنے والے سعودی فرمانرواشاہ سلمان سے ملاقات کرنے کی تیاری کررہے تھے مگر میں نے عبدالعزیز کو خبردار کیا تھا کہ وہ شاہ سلمان سے نہ ملے کیونکہ ولی عہد محمد بن سلمان نے انہیں اغواء کرنے کا منصوبہ تیار کرلیا تھا،میرے خبردار کرنے کے بعد عبدالعزیز طنجہ نہیں گئے۔

فارس کے مطابق ’’اسپین کےجزیرے پر عبدالعزیز کیساتھ 1500دیگر افراد بھی موجود تھے جن میں سے کچھ سعودی شہزادے بھی تھے جو عبدالعزیز کے حمایتی تھے،جب شاہ سلمان طنجہ سے واپس سعودی عرب پہنچے تو انہوں نے عبدالعزیز بن فہد کو حج کرنے کی دعوت دی، معذرت کے باوجود عبدالعزیز کے پاس شاہ سلمان کی دعوت کو قبول کرنے کے سوا اور کوئی چارہ نہیں تھا۔ سعود کے ایک اور ٹویٹ کے مطابق عبدالعزیز بن فہد ،شاہ سلمان کی ضمانت پر حج کیلئے مکہ گئے، مگر حج کا فریضہ ادا کرنے کے بعد عبدالعزیز کو ان کے محل سے گرفتار کرلیا گیا اور پھر ایک نامعلوم مقام پر منتقل کردیا گیا جبکہ اسپین کے جزیرے میں موجود عبدالعزیز کے 1500ساتھیوں کو ایک خصوصی طیارے کے ذریعے واپس سعودی عرب لایا گیا۔

مشہور سعودی ٹوئیٹر صارف نے بھی اس بات کی تصدیق کی تھی کہ سابق فرمانروا شاہ فہد کا بیٹا عبدالعزیز جدہ میں واقع اپنے محل میں محمد بن سلمان کے حکم پر گرفتار ہوچکا ہےاور کسی نامعلوم مقام پر موجود ہے، جبکہ ان کی والدہ ’’الجوہرہ‘‘نے اپنے بیٹے تک رسائی حاصل کرنے کی کوشش کی تھی اور اس حوالے سے شاہ سلمان سے ٹیلی فونک رابطہ بھی کرنے کی بھی کوشش کی مگر سابق سعودی فرمانروا شاہ فہد کی اہلیہ کی تمام تر کوششیں بے سعود رہیں۔ مجتہد کے مطابق عبدالعزیز کی والدہ نے اپنے بیٹے کی گرفتاری کے بعد سےکچھ نہیں کھایا پیا۔

مجتہد کے مطابق محمد بن سلمان آل سعود خاندان سے تعلق رکھنے والے اپنے مخالفین سے آہنی ہاتھوں سے نمٹنے پر مصر ہیں اور سبھی کو جیل میں بند کردینگے خواہ وہ بانی سعودی عرب شاہ عبدالعزیز کے باقی زندہ رہنے والے بیٹے ہی کیوں نا ہوں۔

آخر میں آپ کو بتاتے چلیں کہ عبدالعزیز بن فہد نے آخری مرتبہ اپنے ٹوئیٹر اکائونٹ پر ٹویٹ کرتے ہوئے کہا کہا’’میں حج کی ادائیگی پر اللہ تعالیٰ کا شکرگزار ہوں، اپنے چچا (شاہ سلمان)سے ملاقات کے بعد میں واپس اسپین کے جزیرے رخت سفر باندھ رہا ہوں اور اگر میں سفر نہیں کرسکا تو سمجھ لینا کہ میرا قتل ہوگیا ہے۔جس کا ذمہ دار آپ سب کے علم ہوگا کہ کون ہوسکتا ہے۔

یہ بھی دیکھیں

ڈائن بھی دس گھر چھوڑ دیتی ہے

(وسعت اللہ خان)  نائن الیون کے بعد سے فاٹا دہشتگردی اور انسدادِ دہشتگردی کے دو ...

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے