پیر , 20 مئی 2019

سعودی عرب ، حزب اللہ کی حمایت پر 12افراد بلیک لسٹ کردئیے گئے

images

جدہ (نامہ نگار) سعودی عرب میں حزب سے تعلقات کے سبب 12 افراد کو بلیک لسٹ کردیا گیا ہے۔ ان میں 8 شامی اور لبنانی نژاد ایک امریکی اور ایک کینیڈین شامل ہیں۔ مملکت کے عدالتی ادارے ان 12افراد کے بینک اکاؤنٹس، سرمایہ کاریوں اور غیر منقولہ جائیدادوں کے اثاثوں کے بارے میں تحقیقات کررہے ہیں۔ ایسے ہر ادارے اور ہر شخص کے بارے میں پوچھ گچھ ہوگی۔ جو حزب اللہ سے رابطہ میں ہوگا یا سعودی عرب کے اندر یا باہر ان سے تعلقات استوار کئے ہوئے ہوگا۔ ذرائع نے یہ بھی بتایا کہ وزارت داخلہ نے سعودی عدالتوں اور وثیقہ نویسی کے اداروں کو ہدایت کی تھی وہ مذکورہ افراد یا کمپنی کی جائیدادوں، بینک کے کھاتوں یا سرمایہ کاریوں سے متعلق مہیا معلومات فراہم کریں۔ وزارت داخلہ نے تمام اداروں اور افراد کو اس بات کا پابند بنایا ہے کہ حزب اللہ سے منسوب افراد یا کمپنی کی تجارتی سرگرمیوں اور کسی بھی قسم کے مالی لین دین کی تفصیلات سے آگاہ کیا جائے۔ سعودی عدالتوں اور وثیقہ نویسی کے اداروں نے حال ہی میں حزب اللہ سے وابستہ 44 لبنانیوں کی بابت تفصیلات جمع کیں۔ عدالت کارروائی کے تحت مذکورہ افراد پر یہ پابندی عائد کردی گئی ہے کہ ان کے بینک اثاثے باہر نہ جانے دئیے جائیں اور ان کی مالی سرگرمیوں پر نظر رکھی جائے۔واضح رہے سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات سمیت دیگر عرب ممالک میں شیعہ دشمنی کھل کر سامنے آچکی ہے، عالمی سطح پر سعودی عرب کی دہشتگرد گروہ داعش ، بوکو حرام سمیت دیگر دہشتگرد گروہوں کو اسلحہ کی فراہمی ڈھکی چھپی نہیں ہے۔

یہ بھی دیکھیں

اسرائیل عالمی بائیکاٹ تحریک کے خلاف سرگرم

یروشلم (مانیٹرنگ ڈیسک)اسرائیلی اخبارات کے مطابق صہیونی ریاست کے بائیکاٹ کےلیے سرگرم عالمی تنظیموں کے …