بدھ , 22 مئی 2019

صیہونی وزیراعظم بنجمن نیتن یاھو نے فوج کو فلسطینیوں کیخلاف فری ہینڈ دے دیا

image_news_2016_April_7_3457_300_0

مقبوضہ بیت المقدس (مانیٹرنگ ڈیسک)اسرائیلی وزیراعظم نے فلسطین کے مقبوضہ مغربی کنارے، بیت المقدس اور دوسرے علاقوں میں نہتے فلسطینیوں کے خلاف فوج کو دہشت گردی کی کارروائیاں جاری رکھنے کے لیے فری ہینڈ دے دیا ہے۔مرکزاطلاعات فلسطین کے مطابق اسرائیلی وزیراعظم نیتن یاھو نے مغربی کنارے میں یہودی کالونیوں کے دورے کے دوران فوجی حکام سے ملاقات کی۔ اس موقع پر نیتن یاھو نے فوجیوں کو ہدایت کی کہ وہ فلسطینیوں کے خلاف طاقت کے استعمال کا سلسلہ جاری رکھیں۔اسرائیلی وزیراعظم نے غرب اردن اور بیت المقدس میں فلسطینیوں کی جاری تحریک انتفاضہ القدس کو ’دہشت گردی‘ قرار دیا اور فوجیوں کو ہدایت کی کہ وہ فلسطینیوں کی دہشت گردی کی کاروائیوں کی روک تھام کے لیے بھرپور آپریشن جاری رکھیں۔غرب اردن میں یہودی کالونیوں کے دورے کےموقع پر نیتن یاھو کے ہمرہ وزیردفاع موشے یعلون اور دیگر وزراء بھی موجود تھے۔ اسرائیلی وزیراعظم نے کہا کہ فلسطینی مزاحمت کاروں کے خلاف کھل کر کارروائی جاری رکھی جائے۔ فوج پر فلسطینیوں کے خلاف کارروائیوں کے لیے کوئی پابندی نہیں ہے۔اسرائیلی وزیراعظم نے غرب اردن میں فوج اور خفیہ ادارے’’شاباک‘‘ کے اہلکارو کی کارروائیوں کو سراہتے ہوئے کہا کہ سیکیورٹی اداروں کو اسرائیلی تنصیبات اور یہودی آباد کاروں کے لیے خطرہ بننے والے فلسطینیوں کے خلاف اپنی کارروائی جاری رکھنی چاہیے۔

یہ بھی دیکھیں

امریکہ سعودی عرب کا دودھ دوہنے کے بعد سرکاٹ دے گا؛سربراہ عراقی تنظیم نجباء

بغداد(مانیٹرنگ ڈیسک)عراقی تنظیم نجباء کے سیاسی شعبہ کے سربراہ نے کہا ہے کہ امریکہ سعودی …