بدھ , 26 ستمبر 2018

اقوام متحدہ کی ہیومن رائٹس کونسل کے اجلاس میں بحرین حکومت کی بے عزتی

نیویارک (مانیٹرنگ ڈیسک) بحرین کے انسانی حقوق کے ادارے نے عرب آزاد اداروں کے تعاون سے بحرین میں 13 انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کو ریکارڈ کرلیا ہے، جس کو اقوام متحدہ کی ہیومن رائٹس کونسل کے 36ویں اجلاس میں پیش کیا گیا ہے۔

بحرین کی انسانی حقوق کی یونین، ادارہ سلام، جو بحرینی حکومت سے مستقل ہیں، نے بحرین میں ہونے والی اہم خلاف ورزیوں کی فہرست فراہم کی ہے:

– تشدد اور ظلم

– آیت اللہ عیسی قاسم کو زبردستی گھر میں قید کرنا

– رکن پارلیمان اور الوفاق کے رکن شیخ حسن عیسی کو 590 دن تک قید تنہائی میں رکھنا

– تعلیم کے مسائل میں خلاف ورزیاں

– پھانسی کی سزا

– پرامن احتجاج پر پابندی

– شہریت کی منسوخی

– آزادی رائے پر پابندی

– انسانی حقوق کی مدافع ابتسام الصایغ نامی خاتون کو جیل میں ڈالنا

– بحرین کے سیکیورٹی اداروں کے مظالم

– پچھلے اجلاسوں میں بحرین حکومت پر ہونے والی تنقیدیں تا حال باقی ہونا

یہ بھی دیکھیں

عراق میں داعش مخالف نام نہاد اتحاد کا حشدالشعبی کے ہیڈکوارٹر پر حملہ

بغداد (مانیٹرنگ ڈیسک) عراق میں گذشتہ چند ماہ کے دوران عوامی رضاکار فورس الحشدالشعبی کا ...