جمعرات , 23 نومبر 2017

برما کی فوج روہنگیا مسلمانوں کے خلاف جرائم میں ملوث ہے:امریکا

واشنگٹن (مانیٹرنگ ڈیسک) امریکی وزیرخارجہ ریکس ٹیلرسن نے کہا ہے کہ روہنگیا نسل کے مسلمانوں کی نسل کشی اور قتل عام میں برما کی فوج قصور وار ہے۔

اطلاعات کے مطابق نیویارک میں ایک تھینک ٹینک سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ برما میں روہنگیا مسلمانوں کے ساتھ فوج اور پولیس کے ہاتھوں برتا جانے والا سلوک باعث تشویش ہے۔ برما کی فوج جو کچھ وہاں کے مسلمانوں کے ساتھ کر رہی ہے وہ غیر فطری ہے۔

ریکس ٹیلرسن نے کہا کہ میں نے میانمار کی وزیراعظم اونگ سانگ سوچی سے ٹیلیفون پر سول حکومت کی سربراہ کے طور پر رابطہ کیا۔ ہم میانمار میں مسلمانوں پر مظالم میں برما کی فوج کو قصور وار اور ذمہ دار قرار دیں گے۔

امریکی وزیرخارجہ کا کہنا تھا کہ امریکا برما کے حکام کو امدادی اداروں بالخصوص ہلال احمر، ریڈ کراس، اقوام متحدہ کی امدادی ایجنسیوں اور دیگر اداروں کو متاثرہ علاقوں تک رسائی دلوانے کے لیے کوششیں جاری رکھے گا۔

یہ بھی دیکھیں

شام میں قیام امن کے بارے میں ایران ، روس اور ترکی کے فوجی سربراہان کی ملاقات اور گفتگو

ترک فوج کے چیف آف اسٹاف کے دفتر کی طرف سے جاری ہونے والے بیان ...