جمعہ , 19 جولائی 2019

سعودیہ نے مشرق وسطیٰ میں انتہاپسندی اور شیعہ سنی اختلافات کو ہوا دی ، امریکی کالم نگار

Obama Guantanamo Bay

نیویارک (مانیٹرنگ ڈیسک)امریکی جریدے نیویارک ٹائمز کے مطابق، امریکی کالم نگار نیکولاس کرسٹوف نے اپنے کالم میں سعودی عرب کو مغربی ممالک میں اسلاموفوبیا کی اصل وجہ قرار دیا ہے۔انہوں نے اپنی تحریر میں لکھا کہ اس وقت پوری دنیا میں اسلام کی شبیہ کو مکمل طور پر مجروح کرنے کی کوشش کی جارہی ہے۔ حال ہی میں ایک امریکی ہوائی جہاز سے ایک طالبعلم کو صرف عربی بولنے کی وجہ سے اتار دیا گیا۔ یہ پہلا واقعہ نہیں ہے بلکہ اس سے پہلے چھ بار اس طرح کے ناگوار واقعات پیش آچکے ہیں۔انہوں نے کہا کہ اسلام سے بیزاری ہمارے سیاسی ڈھانچے میں بھی مکمل طور پر ظاہر ہونے لگی ہے۔ چنانچہ رپبلکن امیدوار ڈونالڈ ٹرمپ نے انتخابی مہم کے دوران تقریر ہوئے کہا کہ مسلمانوں کو امریکہ میں داخل نہیں ہونے دینا چاہئے۔ اسی طرح ایک اور ریپبلکن امیدوار ٹیڈ کروز نے بھی حکومت سے مطالبہ کیا تھا کہ مسلم نشین علاقوں میں گشت کے لیے خصوصی ٹیم تشکیل دینی چاہئے تاکہ ان کی نقل و حرکت پر نظر رکھی جاسکے۔امریکہ میں اسلاموفوبیا کے نمونے بیان کرنے کے بعد نیکولاس کرسٹوف نے لکھا کہ جو لوگ ان واقعات کے پس پردہ اسباب سے بےخبر ہے انہیں یہ جان لینا چاہئے کہ ان واقعات کے پیچھے سعودی عرب کا ہاتھ ہے۔ سعودی عرب ہی ہے جو اسلام کی بدنامی کا سبب بن رہا ہے۔کالم نگار نے کہا کہ اسلام کو جتنا ٹرمپ اور کروز جیسے لوگ نقصان پہنچا رہے ہیں اس سے کہیں زیادہ سعودی عرب نقصان پہنچا رہا ہے اور جس طرح ہم ٹرمپ اور کروز کے خلاف مذمتی بیان دیتے ہیں اسی طرح ہمیں سعودی عرب کے خلاف بھی آواز اٹھانی چاہئے۔انہوں نے کہا کہ سعودی حکومت نے ہی مشرق وسطیٰ میں انتہاپسندی کا بیج بویا اور شیعہ سنی اختلافات کو ہوا دی ہے۔ اسی کی انتہاپسندانہ پالیسیوں کا نتیجہ ہے کہ آج مشرق وسطیٰ خانہ جنگی کی مار جھیل رہا ہے۔امریکی کالم نگار نے کہا کہ ایسا نہیں ہے کہ سعودی عرب صرف اپنے ملک کے اندر خواتین کو ان کے بنیادی حقوق سے محروم رکھتا ہے یا اقلیتوں پر شکنجے کرتا ہے بلکہ وہ فقیر ممالک میں بچوں کے لیے مختلف مدارس قائم کرتا ہے کہ جہاں پر مذہبی منافرت اور شدت پسندی کی تعلیم دی جاتی ہے۔

یہ بھی دیکھیں

ایران نےامریکا کیساتھ بات چیت کا امکان مسترد کردیا

اقوام متحدہ میں ایرانی ترجمان علی رضا میر یوسفی کا کہنا ہے کہ  امریکا کیساتھ …