بدھ , 25 اپریل 2018

سعودی عرب میں اہل تشیع رہنماؤں کی گرفتاریاں

ریاض (مانیٹرنگ ڈیسک)سعودی فوجیوں نے صوبہ الشرقیہ کے العوامیہ ٹاؤن پر حملہ کرکے چار شیعہ رہنماؤں کو گرفتار کرکے نامعلوم مقام پر منتقل کردیا ہے۔
تفصیلات کے مطابق گرفتار کیے جانے والے شیعہ رہنما، شہید آیت اللہ نمر باقر النمر کے قریبی رشتہ دار بتائے جاتے ہیں آیت اللہ نمر کو سعودی حکام نے دو برس قبل بے بنیاد الزامات کے تحت سزائے موت دیکر بے دردی سے شہید کردیا تھا۔لبنان کی العہد ویب سائٹ کے مطابق سعودی فوجیوں نے شہید آیت اللہ نمبر باقرالنمر کے بیٹے، بھائی اور دو بھتیجوں کو گرفتار کرکے نامعلوم مقام پر منتقل کیا ہے۔سعودی فوجیوں نے شہید آیت اللہ نمبر کے بھائی عبداللہ النمر کے گھر میں توڑ پھوڑ بھی کی اور گھر کی خواتین اور بچوں کو بے تحاشہ ہراساں کیا۔سعودی فوجیوں نے اس موقع پر مزاحمت کرنے والے دیگر شہریوں کو تشدد کا نشانہ بنایا جس کے نتیجے میں متعدد افراد زخمی بھی ہوئے ہیں۔سعودی سیکورٹی اہلکار پچھلے چند روز کے دوران کئی بار ملک کے شیعہ آبادی والے علاقے العوامیہ پر حملے کرکے ، متعدد افراد کو گرفتار کر چکے ہیں۔

یہ بھی دیکھیں

یمن :آل سعود کی بمباری سے انصار اللہ کی اعلی سیاسی کونسل کے سربراہ صالح الصماد شہید ہوگئے

صنعا (مانیٹرنگ ڈیسک)سعودی عرب کی سرپرستی میں قائم اتحاد کی بمباری کے نتیجے میں یمن ...