اتوار , 21 اکتوبر 2018

ایران کے بارے میں اسرائیلی دعوی مضحکہ خیز ہے، ترجمان وزارت خارجہ

تہران (مانیٹرنگ ڈیسک) ایران کے وزارت خارجہ کے ترجمان نے ایک بار پھر بھی کہا ہے کہ شام کی قانونی حکومت کی درخواست پر ایران دمشق کو فوجی مشاورت فراہم کر رہا ہے۔

وہ شام پر اسرائیل کی فضائی جارحیت اور صیہونی حکومت کا جنگی طیارہ مار گرائے جانے کے واقعے پر ردعمل ظاہر کر رہے تھے۔ ایران کی وزارت خارجہ کے ترجمان نے کہا کہ دنیا کے ایک خود مختار ملک کی حیثیت سے شام کو اپنی ارضی سالمیت اور اقتدار اعلی کے دفاع کا حق حاصل ہے۔

انہوں نے کہا کہ اسرائیل اپنی دروغگوئی اور نفسیاتی حربوں کے ذریعے اپنے ناجائز وجود اور خطے کے مسلمان ملکوں کے خلاف جارحیت اور ظلم کو ہرگز نہیں چھپا سکتا۔ایران کی وزارت خارجہ کے ترجمان نے واضح کیا کہ ایران کے ڈرون طیاروں کی پروازوں اور اسرائیلی جنگی طیارے کو مار گرائے جانے میں ایران کی مداخلت کا اسرائیلی دعوی اس قدر مضحکہ خیز ہے کہ اس پر کوئی تبصرہ بھی نہیں کیا جاسکتا۔

انہوں نے کہا کہ شام میں اسلامی جمہوریہ ایران کی فوجی مشاورت اس ملک کی قانونی حکومت کی درخواست پر انجام پا رہی ہے۔قابل ذکر ہے کہ شام کے ایئر ڈیفنس یونٹ نے ہفتے کی صبح اپنی سرزمین پر جارحیت کرنے والے اسرائیل کے ایف سولہ جنگی طیارے کو مار گرایا تھا۔شام کے ایئر دیفنس یونٹ کے ہاتھوں اسرائیل کا ایف سولہ طیارہ مار گرائے جانے کے تھوڑی دیر بعد اسرائیلی جنگی طیاروں نے ایک بار پھر شام کے خلاف جارحیت کا ارتکاب کرتے ہوئے دمشق کے نواحی علاقے پر بمباری کی ہے۔

یہ بھی دیکھیں

یوٹیوب سے سالانہ ایک ارب روپے کمانے والا 6 سالہ بچہ

واشنگٹن (مانیٹرنگ ڈیسک) امریکا میں 6 سالہ بچہ رائن یوٹیوب پر اپنے تخلیق کردہ پروگرام ...