اتوار , 25 فروری 2018

عراق اور شام میں ایران کاموجودہونا وہاں کی حکومتوں کی مرضی سے ہے

تہران(مانیٹرنگ ڈیسک) اسلامی جمہوریہ ایران کے سابق وزير خارجہ اور رہبر معظم انقلاب اسلامی کے بین الاقوامی مشیر ڈاکٹر علی اکبر ولایتی نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ عراق اور شام میں ایران کی موجودگی وہاں کی حکومتوں کی درخواست پر ہے۔ذرائع کے مطابق اسلامی جمہوریہ ایران کے سابق وزير خارجہ اور رہبر معظم انقلاب اسلامی کے بین الاقوامی مشیر ڈاکٹر علی اکبر ولایتی نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ عراق اور شام میں ایران کی موجودگی وہاں کی حکومتوں کی درخواست پر ہے اور ایران کی عراق اور شام میں موجودگی بین الاقوامی قوانین کے مطابق ہے لہٰذا عراق اور شام سے ان ملکوں کو جانا چاہیے جو وہاں کی حکومتوں کی درخواست کے بغیر اور بین الاقوامی قوانین کی خلاف ورزی کرتے ہوئے وہاں موجود ہیں ۔ ڈاکٹر علی اکبر ولایتی نے کہا کہ پوری دنیا کا اس بات پر یقین ہے کہ امریکہ خطے میں دہشت گردی کے فروغ دے رہا ہے اور دہشت گردوں کی پشت پناہی کررہا ہے ۔

یہ بھی دیکھیں

لبنان نے امریکی تجویز مسترد کردی

بیروت (مانیٹرنگ ڈیسک) لبنان کی پارلیمنٹ کے اسپیکر نے تیل کے معاملے پر صیہونی حکومت ...