جمعرات , 21 نومبر 2019

اسرائیل کو اُردنی قومی وسائل پر ڈاکہ ڈالنے کا حق نہیں،مناف مجلی

lsrael urdan meeting

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) اسرائیل اور اردن کے درمیان بحر مردار میں گیس کے خفیہ معاہدے کے بارے میں خبریں سامنے آنے کے بعد عوامی ، سماجی اور سیاسی حلقوں میں شدید رد عمل سامنے آیا ہے۔ عوامی کمیٹی کے چیئرمین مناف مجلی نے سوموار کے روز اپنے ایک بیان میں کہا کہ بحر مردار میں اسرائیل کو گیس کے اخراج کا ٹھیکہ دینا اردن کے قدرتی وسائل بالخصوص گیس کی چوری کا حق دینا ہے۔مناف مجلی کا کہنا ہے کہ اسرائیل کو اردنی قومی وسائل پر ڈاکہ ڈالنے کا کوئی حق نہیں ہے۔ اگر اردنی حکومت اسرائیل کو بحر مردار میں گیس کی نکاسی کا ٹھیکہ دیتا ہے تو یہ اردنی گیس کی چوری تصور کی جائے گی۔اطلاعات کے مطابق اردن میں قومی دفاع اور اسرائیل سے تعلق کے خلاف سرگرم قومی کمیٹی نےاردنی حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ اسرائیل کے ساتھ بحر مردار میں گیس کے حصول کے خفیہ معاہدے کی وضاحت کرے۔خیال رہے کہ حال ہی میں اردنی حکومت نے کہا تھا کہ وہ اسرائیل کے ساتھ مل کر بحر مردار میں گیس کے حصول کے منصوبے پر کام کر رہا ہے۔ اسرائیل کی جانب سے اس دعوے کی تصدیق کی گئی تھی تاہم یہ اطلاعات بھی آئی تھیں کہ تکنیکی اور مالی وجوہات کی بناء پر اس منصوبے پر کام مزید کئی ماہ تک تاخیر کا شکار ہو سکتا ہے۔

یہ بھی دیکھیں

امریکہ کی ایرانی قوم کی حمایت شرمناک جھوٹ ہے: ظریف

تہران: ایرانی وزیر خارجہ نے ملک میں حالیہ ہنگامی آرائی سے متعلق امریکی حکام کے …