پیر , 16 جولائی 2018

مغرب بحران شام کو طول دینے کے بہانے تلاش کر رہا ہے:امریکی تجزیہ کار

(مانیٹرنگ ڈیسک)ایک معروف امریکی تجزیہ کار وعالمی امور کے ماہر نے کہا ہے کہ حکومت دمشق پر مغرب کی طرف سے کیمیائی ہتھیار استعمال کرنے کے الزامات کا مقصد شامی بحران کو طولانی بناکر اس ملک میں مزید مداخلت کرنے کی راہ ہموار کرنا ہے۔

ایرانی ذرائع ابلاغ کے ساتھ انٹرویو میں ’’برچٹ جونکرس‘‘نے کہاکہ حکومت دمشق پر مغرب کی طرف سے کیمیائی ہتھیار استعمال کرنے کے الزامات کا مقصد شامی بحران کو طولانی بناکر اس ملک میں مزید مداخلت کرنے کی راہ ہموار کرنا ہے۔

امریکی خبررساں ایجنسی این بی سی کےساتھ انٹرویو میں روسی صدر ولاد میر پوتن نے مغربی حکومتوں کی طرف سے عرب جمہوریہ شام کی حکومت پر کیمیائی ہتھیار استعمال کرنے کی الزامات کو مسترد کرتے ہوئے کہاکہ دہشتگرد کیمیائی ہتھیاروں کا استعمال کرکے حکومت شام کو اس کی ذمہ دار ٹھہرانے کی کوشش کرتے ہیں۔روسی صدر نے کہاکہ شام میں مبینہ کیمیائی ہتھیاروں کے استعمال کے کسی بھی واقعے کی غیر جانبدارانہ تحقیقات کرنے کی ضرورت ہے۔

امریکی تجزیہ کار نے کہاکہ شامی نائب وزیر اعظم کے اس بیان کہ شامی حکومت اورفوج پر کیمیائی ہتھیار استعمال کرنے کےجھوٹے الزامات کوئی نئی بات نہیں ہے اسے قبل بھی مغربی حکومتیں اوران سے وابستہ میڈیا بغیر کسی شواہد کے اسطرح کے الزامات عائد کرتے رہے ہیں۔

انہوں نے کہاکہ 2013 ء میں غوطہ شرقی میں کیمیائی ہتھیار استعمال کرنا جسے کبھی ثابت نہیں کیاگیا کے جھوٹے الزامات عائد کئے گئے جس کے بعد شامی حکومت کے تمام کیمیائی ہتھیار تلف کرلئے گئے لیکن مغربی حکومت نے اس کے بعدکم ازکم دوبار کیمیائی ہتھیار استعمال کرنے الزامات عائد کئے۔

یہ بھی دیکھیں

ملکی تاریخ میں پہلی بار انتخابی عملے سے حلف لینے کا فیصلہ

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) الیکشن کمیشن نے ملکی تاریخ میں پہلی بار انتخابی عملے سے حلف ...