اتوار , 27 مئی 2018

آئرلینڈ کی فالو آن کے بعد عمدہ بیٹنگ، بغیر کسی نقصان کے 64 رنز بنا لیے

ڈبلن (مانیٹرنگ ڈیسک) آئرلینڈ کی ٹیم نے اپنی تاریخ کے پہلے ٹیسٹ میچ میں فالو آن کے بعد شاندار انداز میں واپسی کرتے ہوئے دوسری اننگز میں پاکستانی فیلڈرز کی ناقص کارکردگی سے فائدہ اٹھاتے ہوئے بغیر کسی نقصان کے 64 رنز بنا لیے ہیں۔پاکستان کی پہلی اننگز کے اسکور 310 رنز کے جواب میں محمد عباس اور محمد عامر کی عمدہ باؤلنگ کی بدولت آئرلینڈ کی ٹیم کو پہلی اننگز میں 130 رنز پر ٹھکانے لگا کر فالو آن پر مجبور کردیا۔ڈبلن میں جاری آئرلینڈ اور پاکستان کے درمیان ٹیسٹ کرکٹ کی تاریخ کے پہلے بین الاقوامی ٹیسٹ میچ

کے تیسرے روز پاکستان کی ٹیم نے 6 کھلاڑیوں کے نقصان پر اپنی 268 رنز کی نامکمل اننگز دوبارہ شروع کی تو 52 رنز پر ناٹ آؤٹ شاداب خان صرف 3 رنز کا اضافہ کرنے کے بعد 55 کے اسکور پر پویلین لوٹ گئے۔دوسری جانب اپنا پہلا ٹیسٹ میچ کھیلنے والے فہیم اشرف نے مزاحمت جاری رکھی اور ٹیم کا اسکور 300 تک پہنچانے میں اہم کردار ادا کیا اور خود 83 رنز بنا کر آؤٹ ہوگئے۔پاکستان نے اپنی پہلی اننگز 310 رنز 9 کھلاڑی آؤٹ پر ڈکلیئر کردی۔آئرلینڈ کی ٹیسٹ کرکٹ میں پہلی اننگز کا آغاز کسی ڈراؤنے خواب سے،

کم نہ تھا اور 7 رنز پر اس کے 4 کھلاڑی پویلین لوٹ چکے تھے۔اس تباہی کے ذمے دار عباس تھے جنہوں نے ایڈ جوائس، اینڈی بلبرنی اور نیل اوبرائن کو پویلین رخصت کیا جبکہ کپتان ولیم پورٹرفیلڈ کی وکٹیں محمد عامر نے بکھیریں۔

اس موقع پر کیون اوبرائن اور پال اسٹرلنگ نے وکٹیں گرنے کا سلسلہ کچھ دیر کے لیے روک دیا اور 29 رنز کی شراکت قائم کی لیکن فہیم اشرف نے ٹیسٹ کرکٹ میں اپنے پہلے اوور کی تیسری گیند پر 17 رنز بنانے والے اسٹرلنگ کی اننگز کا خاتمہ کردیا۔کپتان سرفراز احمد نے جلد ہی شاداب خان کو باؤلنگ پر متعارف کرایا جنہوں نے کپتان کے اعتماد پر پورا اترتے ہوئے اپنے دوسرے ہی اوور میں یکے بعد دیگرے اسٹورٹ تھامسن اور ٹائون کین کو آؤٹ کر کے آئرلینڈ کے لیے فالو آن کا خطرہ پیدا کردیا۔

آئرلینڈ کو بڑا دھچکا اس وقت لگا جب محمد عامر نے کیون اوبرائن کو پویلین چلتا کردیا جو اچھی فارم میں نظر آ رہے تھے لیکن ان کی اننگز بھی 40 رنز تک محدود رہی۔73 رنز پر 8 وکٹیں گرنے کے بعد آئرلینڈ کی سنچری بھی مکمل ہوتی نظر نہیں آ رہی تھی لیکن ٹیل اینڈرز پاکستانی باؤلرز کے خلاف ڈٹ گئے۔گیری ولسن نے بوائڈ رینکن کے ساتھ مل کر ٹیم کی سنچری مکمل کرائی اور نویں وکٹ کے لیے 34 رنز جوڑ کر اننگز کی سب سے بڑی شراکت قائم کی لیکن عباس نے رینکن کو آؤٹ کر کے اس مزاحمت کا خاتمہ کردیا۔

پاکستان کو آخری وکٹ کے حصول کے لیے کچھ انتظار کرنا پڑا اور ولسن نے ٹم مرتاغ کے ساتھ مزید 23 رنز جوڑ کر اسکور 130 تک پہنچا دیا لیکن شاداب نے مرتاغ کو پویلین رخصت کر کے آئرش ٹیم کی اننگز کا بھی خاتمہ کردیا، ولسن ناقابل شکست 33 رنز کے ساتھ ٹیم کے دوسرے کامیاب ترین بلے باز رہے۔آئرلینڈ کو 180 رنز کے خسارے کے سبب فالو آن کا سامنا کرنا پڑا اور پاکستان نے خود بیٹنگ کرنے کے بجائے میزبان ٹیم کو فالو آن کرا دیا۔پاکستان کی جانب سے محمد عباس 4 وکٹیں لے کر سب سے کامیاب باؤلر رہے۔

جبکہ شاداب خان نے 3 اور عامر نے 2 وکٹیں لیں۔دوسری اننگز کے آغاز ہی پاکستان کو وکٹ لینے کا موقع ملا لیکن محمد عامر کی گیند پر پاکستانی فیلڈرز دونوں اوپنرز کا ایک ایک کیچ لینے میں ناکام رہے۔آئرش اوپنرز ایڈ جوائس اور ولیم پورٹر فیلڈ نے اس موقع کا پورا فائدہ اٹھایا اور دن کے اختتام تک مزید کسی نقصان کے بغیر 64 رنز بنا لیے، جوائس 39 اور پورٹر فیلڈ23 رنز پر بیٹنگ کر رہے ہیں۔آئرلینڈ کو پاکستان کی پہلی اننگز کا اسکور برابر کرنے کے لیے مزید 116 رنز درکار ہیں۔واضح رہے کہ پاکستان اور آئرلینڈ کے درمیان،

تاریخی ٹیسٹ میچ کا پہلا دن بارش کی نذر ہوگیا تھا جس کے باعث پہلے دن کھیل نہیں ہو سکا تھا۔میچ کے دوسرے روز موسم میں بہتری کے بعد میچ کا آغاز ہوا اور آئرلینڈ نے ٹاس جیت کر فیلڈنگ کا فیصلہ کیا تھا۔

یہ بھی دیکھیں

شاہد آفریدی کا ورلڈ الیون کی جانب سے میچ کھیلنے کا اعلان

کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک) اسٹار آل راؤنڈر اور سابق کپتان قومی کرکٹ ٹیم شاہد خان آفریدی نے ...