ہفتہ , 20 اکتوبر 2018

چیئرمین نیب کی قائمہ کمیٹی کے سامنےپیش ہونے سے معذرت

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) چیئرمین نیب نے قائمہ کمیٹی قانون و انصاف کے سامنے پیش ہونے سے معذرت کر لی ، کہتے ہیں مصروفیات کے باعث پیش نہیں ہو سکا۔قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے قانون و انصاف نے رانا حیات کے نکتہ اعتراض کا نوٹس لیتے ہوئے چیئرمین نیب جسٹس جاوید اقبال (ر) کو آج طلب کیا تھا۔ قائمہ کمیٹی کا اجلاس ڈھائی بجے ہوا ۔

چیئرمین نیب نے آج کمیٹی کے سامنے پیش ہونے سے معذرت کرلی ہے۔ چیئرمین نیب نے جواب میں کہا کہ کمیٹی میں پیش ہونے کا نوٹس آج صبح موصول ہوا، مصروفیات کا شیڈول طے تھا لہٰذا کمیٹی میں پیش ہونے کے لیے مناسب وقت دیا جائے۔

ذرائع کے مطابق قائمہ کمیٹی نے معذرت قبول کرنے سے انکار کر دیا ہے ، کمیٹی کی جانب سے معذرت مسترد کیے جانے کے بعد چیئرمین نیب کمیٹی میں پیشی سے متعلق کچھ دیر میں قومی اسمبلی کوآگاہ کریں گے۔قائمہ کمیٹی نے چیئرمین نیب کو دوبارہ 22 مئی کو طلب کرلیا ہے۔کمیٹی نے نواز شریف پر رقم بھارت بھیجنے کا الزام لگانے پر طلب کیا تھا ۔

جبکہ سید نوید قمر اور شگفتہ جمانی نے قائمہ کمیٹی قانون وانصاف سے استعفی دیدیا۔ استعفے اسپیکر قومی اسمبلی کو جمع کرا دیے گئے ۔دونوں ارکان نے استعفیٰ دینے کی وجوہات بتاتے ہوئے کہا کہ قائمہ کمیٹی کی میٹنگ عجلت میں بلائی گئی ،میٹنگ کا مقصد چیئرمین نیب کو پریشر میں ڈالنا تھا،یہ اقدام پارلیمانی اقدار کے خلاف اور آزادانہ تحقیقات کو بھی متاثر کر سکتا ہے۔برائے مہربانی ہمارے استعفے قبول کئے جائیں۔

یہ بھی دیکھیں

قطری نائب وزیراعظم: دہشت گردی کیخلاف پاکستان کو حاصل ہونے والی کامیابیوں کی تعریف

راولپنڈی (مانیٹرنگ ڈیسک) آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سے قطر کے نائب وزیراعظم و ...