بدھ , 15 اگست 2018

جنوبی کوریا کے ’ناواقف اور نااہل‘ حکام سے بات چیت ممکن نہیں، شمالی کوریا

سیول(مانیٹرنگ ڈیسک) شمالی کوریا کی جانب سے جنوبی کوریا کہ حکام کو ‘ ناواقف اور نااہل’ قرار دیتے ہوئے کہا گیا ہے کہ موجودہ سفارتی صورتحال میں سیول کے ساتھ بات چیت کا دور ممکن نہیں ہے۔ دونوں پڑوسی ممالک کے درمیان اعلیٰ سطح بات چیت کا دور بدھ کو شیڈول تھا لیکن امریکا اور جنوبی کوریا کی مشترکہ فوجی مشقوں کے باعث شمالی کوریا نے اس بات چیت کے دور سے انکار کردیا تھا۔

خیال رہے کہ دو ہفتوں تک جاری رہنے والی‘میکس تھنڈر’ مشقوں کا آغاز 11 مئی کو ہوا تھا اور اس میں ایف 22 لڑاکا طیارے سمیت دنوں اتحادیوں کے 100 جہاز شامل ہیں۔

اس حوالے سے شمالی کوریا کے سرکاری خبررساں ادارے کے سی این اے نے مذاکرات کار ری سون جیون کا حوالہ دیتے ہوئے بتایا کہ جب تک شمالی اور جنوبی کوریا کے درمیان اعلیٰ سطح بات چیت کے دور کا خاتمہ بننے والی سنجیدہ صورتحال کا حل نہیں نکلتا یہ آسان نہیں ہے کہ جنوبی کوریا کی موجودہ حکومت کے ساتھ براہ راست آمنے سامنے بیٹھا جاسکے۔

خیال رہے کہ شمالی کوریا پہلے ہی خبردار کرچکا ہے کہ اگر امریکا نے یکطرفہ طور پر پیانگ یانگ کو جوہری ہتھیاروں کو ختم کرنے پر مجبور کیا تو آئندہ ماہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے ساتھ ہونے والی ملاقات کو منسوخ کردیا جائے گا۔کے سی این اے کے مطابق ری سون جیون نے بات چیت کے دوران کے منقطع ہونے پر جنوبی کوریا کا ردعمل بتاتے ہوئے اسے ‘ محاذ آرائی کا ریکیٹ ’ قرار دیا۔

انہوں نے کہا کہ اس پیشکش پر موجودہ جنوبی کوریا کی انتظامیہ نے ثابت کردیا کہ وہ ایک ناواقف اور نااہل گروپ ہے جو موجود صورتحال کے احساس سے مبرا ہے۔اس حوالے سے سیول کا کہنا تھا کہ انہیں غیر متوقع طور پر اعلیٰ سطح مذاکرات کے ختم ہونے کا پیغام موصول ہوا۔

واضح رہے کہ دونوں ملکوں کی جانب سے استعمال ہونے والی زبان کے بعد پیونگ یانگ کی ماضی کے بیانات میں اچانک اور ڈرامائی واپسی ہے، جو ایک طویل عرصے تک اس بات پر زور دیتا رہا تھا کہ امریکا کے خلاف اپنے دفاع کے لیے اسے جوہری ہتھیار کی ضرورت ہے۔

یاد رہے کہ 27 اپریل کو شمالی کوریا کے سپریم لیڈر کم جونگ اُن ڈیمار کیشن لائن عبور کرکے پہلی مرتبہ جنوبی کوریا پہنچے تھے جہاں انہوں نے شمالی و جنوبی کوریا کی سربراہی کانفرنس میں شرکت کی تھی۔

بعدِ ازاں 29 اپریل کو جنوبی کوریا کے صدر مون جے اِن نے دعویٰ کیا تھا کہ رواں برس مئی میں شمالی کوریا کی جوہری ہتھیاروں کے تجربات کرنے کی سائٹ بند ہوجائے گی۔اس کے ساتھ ساتھ شمالی کوریا نے رواں ماہ کے آخر میں بین الااقوامی میڈیا کی موجودگی میں اپنی جوہری تنصبات کو تباہ کرنے کا اعلان کردیا تھا۔

یہ بھی دیکھیں

پاکستان نے پہلے ملکی ریموٹ سینسنگ سیٹلائٹ کا کنٹرول سنبھال لیا

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) اس سال جون میں چین کی سرزمین سے بھیجے جانے والے پاکستان ...