جمعرات , 21 نومبر 2019

قطر نے سعودی اور عرب امارات کی اشیاء پر پابندی لگادی

دوحہ (مانیٹرنگ ڈیسک) قطر نے دکانداروں کو سعودی عرب کی سربراہی میں گزشتہ سال قطر کا بائیکاٹ کرنے والے ممالک کی اشیا کی دکانوں پر فروخت پر پابندی عائد کردی ہے۔ قطر کے وزارت معاشیات نے دکانداروں کو ہدایات جاری کرتے ہوئے فوری طور پر سعودی عرب، بحرین اور مصر سے بر آمد کی گئی اشیا کو اپنی دکانوں سے ہٹانے کا کہا ہے۔وزارت کا کہنا تھا کہ انسپیکٹرز دکانوں کا دورہ کریں گے اور احکامات پر عمل در آمد کا جائزہ لیں گے۔حکومت کی جانب سے سعودی عرب کے ڈیری مصنوعات کو بھی روکنے کی,

کوشش کی جائے گی تو دیگر ممالک سے سفر کرتے ہوئے قطر آتی ہیں.قطر حکومت کے کمیونکیشن آفس (جی سی او) کا کہنا تھا کہ وہ صارفین کی حفاظت کرنا چاہتے ہیں۔جی سی او کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا کہ رکاوٹ بننے والے ممالک میں بننے والی اشیا جو ان ہی رکاوٹوں کی وجہ سے جی سی سی کے کسٹمز ٹیرٹری کو پاس نہیں کرتیں کو مکمل طور پر انسپیکشن اور کسٹمز کے طریقہ کار سے گزرنا ہوگا۔ان کا کہنا تھا کہ قطر اپنی تجارت کی پالیسی کو کثیر اور دو طرفہ معاہدوں کے حساب سے طے کرتا ہے۔

خیال رہے کہ یہ احکامات خیلیجی بحران کے ایک سال گزرنے کے چند دنوں کے بعد ہی سامنے آئے۔خلیجی ممالک نے قطر کا تجارتی اور سفارتی بائیکاٹ کر رکھا ہے جبکہ قطر نے ان الزامات کو مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ خلیجی ممالک دوحہ میں تبدیلیاں چاہتے ہیں۔

یہ بھی دیکھیں

امریکہ کی ایرانی قوم کی حمایت شرمناک جھوٹ ہے: ظریف

تہران: ایرانی وزیر خارجہ نے ملک میں حالیہ ہنگامی آرائی سے متعلق امریکی حکام کے …