اتوار , 15 دسمبر 2019

شامی فوج کا تکفیری گروہ داعش اور جبہۃ النصرہ پر بڑا حملہ، 20 دہشت گرد ہلاک

66EBBDE9-CB2E-4483-B768-2E3CBC7FF072_cx0_cy11_cw0_w987_r1_s_r1

دمشق (مانیٹرنگ ڈیسک) شامی فوج کے ساتھ ہونے والی جھڑپوں میں جنوبی اور مشرقی شام میں درجنوں داعشی دہشت گرد ہلاک ہو گئے۔ذرائع کے مطابق مشرقی شام میں واقع دیرالزور کے جنوب مغرب میں پانوراما میں شامی فوج کے ساتھ ہونے والی جھڑپوں میں کم از کم بیس دہشت گرد ہلاک ہو گئے۔ ان جھڑپوں کے نتیجے میں پانوراما میں موجود دیگر دہشت گرد عناصر اپنے ساتھیوں کی لاشیں چھوڑ کر فرار ہو گئے۔ ادھر شاہراہ المیادین اور جبل الثردہ میں بھی شامی فوج نے کارروائی کرتے ہوئے داعش کو بھاری جانی نقصان پہنچایا۔ ہلاک ہونے والوں میں داعش کے کئی سرغنہ بھی شامل ہیں۔ السویدا کے شمال مشرقی مضافاتی علاقوں اور درعا میں بھی شامی فوج نے جبہۃ النصرہ دہشت گردوں کے خلاف بڑی کارروائی کی جہاں درعا کے علاقے النعیمیہ میں پندرہ دہشت گرد ہلاک ہو گئے۔ قابل ذکر ہے کہ شام کا بحران دو ہزار گیارہ میں اس ملک کی قانونی حکومت کا تختہ الٹنے کے لئے امریکہ اور اس کے اتحادیوں کے حمایت یافتہ دہشت گرد گروہوں کے حملوں سے شروع ہوا ہے۔

یہ بھی دیکھیں

عراق کے نئے وزیراعظم کا اعلان آئندہ دو دنوں میں

بغداد: الفتح اتحاد کے اعلان کے مطابق عراقی صدر قانونی مہلت ختم ہونے سے پہلے …