منگل , 21 اگست 2018

امریکی اقدامات کے مقابلے کیلئے تیار ہیں: ایران

تہران (مانیٹرنگ ڈیسک)ایران کے پارلیمانی اسپیکر ڈاکٹر علی لاریجانی نے ایٹمی معاہدے سے امریکہ کی علیحدگی کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ امریکہ کے اس اقدام سے ملک کی سرمایہ کاری پر تھوڑا اثر پڑا ہے اور اس سلسلے میں کچھ انتظامات کر لئے گئے ہیں اور مذاکرات کئے جا رہے ہیں۔

ایران کے پارلیمانی اسپیکر ڈاکٹر علی لاریجانی نے منگل کے روز نامہ نگاروں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس بات کے پیش نظر کہ امریکیوں نے ایٹمی معاہدے کے سلسلے میں غیر قانونی اور غیر اخلاقی قدم اٹھاتے ہوئے اس بین الاقوامی معاہدے سے نکلنے کا اعلان کیا ہے، امریکی اقدامات کا مقابلہ کرنے کے لئے صحیح طریقہ کار اختیار کیا جانا ضروری ہے۔انھوں نے کہا کہ ایران کے خلاف امریکی اقدامات کوئی نئی بات نہیں ہے اور ایران میں اسلامی انقلاب کی کامیابی کے بعد سے ہی ایران کے خلاف امریکی اقدامات کا سلسلہ جاری ہے۔

امریکی صدر ٹرمپ نے آٹھ مئی کو ایٹمی معاہدے سے نکلنے کا اعلان کردیا تھا جس کی علاقائی اور عالمی سطح پر مذمت اور مخالفت کی گئی تھی – یورپی ملکوں نے بھی اس بات کا اعلان کیا ہے کہ وہ ایٹمی معاہدے کو باقی رکھیں گے -دوسری جانب رہبرانقلاب اسلامی نے گذشتہ دنوں اپنے ایک خطاب میں فرمایا تھاکہ یورپی ملکوں کو ایٹمی معاہدے کے تعلق سے عملی ضمانت فراہم کرنی ہوگی –

یہ بھی دیکھیں

آیت اللہ العظمی سید علی خامنہ ای کا حجاج بیت اللہ الحرام کے نام اہم پیغام

تہران (مانیٹرنگ ڈیسک) رہبر معظم انقلاب اسلامی حضرت آیت اللہ العظمی خامنہ ای نے حجاج ...