پیر , 10 دسمبر 2018

سعودیہ میں نہ صرف خواتین بلکہ مرد بھی اپنے بنیادی حقوق سے محروم ہیں

لندن (مانیٹرنگ ڈیسک) برطانیہ کے تحقیقاتی مرکز کے مدیر نے سعودی عرب کی شاہی حکومت کی طرف سے سیاسی اور انسانی حقوق کیلئے سرگرم کارکنوں پر وحشیایہ کریک ڈاؤن کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ بن سلمان کے ولی عہد بننے کے بعد 4 ہزار شہریوں کو پابند سلاسل کیا گیا ہے جن میں قریب پانچ سو سیاسی و انسانی حقوق کارکنان بھی شامل ہیں۔

ایک معروف عالمی اردو خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق ذرائع ابلاغ کے ساتھ انٹرویو میں ’’سامح العطفی‘‘نے سعودی عرب کی شاہی حکومت کی طرف سے سیاسی اور انسانی حقوق کیلئے سرگرم کارکنوں پر وحشیایہ کریک ڈاؤن کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ بن سلمان کے ولی عہد بننے کے بعد 4 ہزار شہریوں کو پابند سلاسل کیا گیا ہے جن میں قریب پانچ سو سیاسی و انسانی حقوق کارکنان بھی شامل ہیں۔

انہوں نے کہا کہ سعودی عرب میں خواتین کو مخصوص حقوق دینے کے بارے میں بن سلمان کے دعوے جھوٹ اور فریب ہیں حقیقت میں سعودی معاشرے میں نہ صرف خواتین اپنے بنیادی حقوق بلکہ مرد بھی اپنے بنیادی حقوق سے محروم ہیں۔ انہوں نے کہا کہ سعودی معاشرہ ایک قبائلی کیمونٹی ہے اور تمام معاملات پر ان کا کنٹرول ہے۔ انہوں نے کہاکہ بن سلمان کے ولی عہد بننے کے بعد چار ہزار افراد کو پابند سلاسل کیاگیا ہے جن میں پانچ سو سیاسی وانسانی حقوق کارکنان بھی شامل ہیں جبکہ جزب اختلاف سے تعلق رکھنے والے افراد سے منسلک 14 تنظیموں کی سرگرمیوں کو بھی منجمند کر دیا گیا۔

انہوں نے کہا کہ سعودی عرب کی 14 فیصد سے زائد آبادی خط افلاس سے نیچے زندگی گذار رہی ہے اور حتیٰ دارالحکومت ریاض کے قریب لوگوں کو اپنے مکانات تعمیر کرنے کی اجازت نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ کرپشن اور غریبی سے نمٹنے کے محمد بن سلمان کے دعوے سفید جھوٹ ہیں جبکہ حقیقت میں سعودی عرب کے عوام کی دولت کو شاہی خاندان نے ہڑپ لیا ہے۔ انہوں نے کہاکہ بن سلمان ملک میں کرپشن کے بارے میں بات کرتے ہیں جبکہ حقیقت میں وہ کرپٹ حکمرانوں میں سے ایک ہیں۔

موصوف تجزیہ نگار نے کہا کہ بن سلمان یمن جنگ میں ایسے وقت میں اربوں ڈالر خرچ کر رہے ہیں جبکہ سعودی عرب کی آدھی سے زیادہ آبادی بھوک سے بےحال ہے۔ واضح رہے کہ بن سلمان کے ول عہد بننے کے بعد ریاض نے ملک میں اظہار آزادی کی جرم میں سینکڑوں افراد کو گرفتار کر کے جیلوں میں بند اور انہیں سخت سزائی سنائی ہیں سعودی عرب کی وہابی رژیم نے کچھ  عرصہ قبل ملک کے سرکردہ شیعہ عالم دین آیت اللہ شیخ نمر باقر کو بھی بے بنیاد الزامات کے تحت سزائے موت دیکر شہید کر دیا تھا ۔ بحوالہ نیوز نور

یہ بھی دیکھیں

ایسا کام کریں تاکہ دشمنوں میں ایرانی قوم کو دھمکی دینے کی ہمت بھی نہ رہے:آیت اللہ العظمی خامنہ ای

تہران (مانیٹرنگ ڈیسک)رہبر معظم انقلاب اسلامی حضرت آیت اللہ العظمی خامنہ ای نے بحریہ کے ...