اتوار , 15 ستمبر 2019

اردن میں محمد بن سلمان اور نیتن یاہو کی ملاقات کی تائید

عمان (مانیٹرنگ ڈیسک) سعودی عرب کے امریکہ نواز ولیعہد محمد بن سلمان کی اسلام اور مسلمانوں کے خلاف گھناؤنی سازشوں کا سلسلہ جاری ہے گذشتہ ہفتہ سعودی عرب کے ولیعہد محمد بن سلمان نے اردن میں اسرائیل کے خونخوار وزیر اعظم نیتن یاہو سے ملاقات کی ایک اعلی عرب رہنما نے تائید کر دی ہے۔

خلیج فارس کے ایک اعلی عرب رہنما کا کہنا ہے کہ امارات کے ولیعہد محمد بن زاید کی تجویز پر اردن میں یہ ملاقات انجام پذیر ہوئی ۔ عرب رہنما کے مطابق اسرائیلی وزير اعظم اور سعودی عرب کے ولیعہد نے اس ملاقات میں بیت المقدس کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرنے کے بارے میں بحث اور گفتگو کی۔ ذرائع کے مطابق سعودی عرب، مصر، بحرین اور امارات اسرائیل کے ساتھ اس صدی کا معاملہ کرنا چاہتے ہیں جس میں وہ بیت المقدس کو امریکہ کے ایما پر اسرائیل کو دینے کا گھناؤنا منصوبہ بنا رہے ہیں۔

یہ بھی دیکھیں

برطانوی اراکین پارلیمنٹ کا اسرائیل کے توسیع پسندانہ اقدامات کے مقابلے میں ٹھوس موقف اپنانے کا مطالبہ

لندن (مانیٹرنگ ڈیسک)برطانوی پارلیمنٹ کے ایک سو سے زائد ارکان نے صیہونی حکومت کے توسیع …