بدھ , 19 دسمبر 2018

شام کے شیعہ آبادی والے علاقوں سے عام شہریوں کا انخلا

دمشق (مانیٹرنگ ڈیسک)شمال مغربی شام کے شیعہ آبادی والے محصور علاقوں فوعہ اور کفریہ سے عام شہریوں کا انخلا شروع ہوگیا ہے۔ مقامی ذرائع کا کہنا ہے کہ پہلے مرحلے میں فوعہ اور کفریہ ٹاون سے 6 بسوں کا ایک قافلہ العیس کے راستے سے حلب کے لیے روانہ ہوگیا ہے۔بدھ کے روز ایک سو اکیس بسیں جنوبی حلب کے العیس ٹاؤن کی جانب سے فوعہ اور کفریہ میں داخل ہوئیںتھیں اور پروگرام کے مطابق مرحلہ وار علاقے سے باہر نکلیں گی۔

شامی ذرائع کا کہنا ہے کہ روس کی ثالثی اور ضمانت کے بعد دہشت گرد گروہوں نے جنوب مغربی شام کے علاقے قنیطرہ سے مکمل طور پر نکل جانے پر اتفاق کرلیا ہے۔جبہت النصرہ یا تحریر الشام سے وابستہ دہشت گرد گروہوں نے قنیطرہ کے نواحی علاقوں پر قبضہ کر رکھا ہے اور انہیں اسرائیل کی جانب سے مکمل لاجسٹک اور انٹیلی جینس سپورٹ حاصل ہے۔صوبہ قنیطرہ شام کا ایک انتہائی اسٹریٹیجک صوبہ ہے جس کی سرحدیں مقبوضہ جولان کے پہاڑی علاقوں سے ملتی ہیں جن پر اسرائیل نے ناجائز قبضہ کر رکھا ہے۔

یہ بھی دیکھیں

ایرانی صدر حسن روحانی کا دو روزہ دورہ ترکی

تہران (مانیٹرنگ ڈیسک)اسلامی جمہوریہ ایران کے صدرحسن روحانی ایک اعلیٰ سطحی وفد کے ہمراہ ترکی ...