جمعرات , 15 نومبر 2018

بھارت کے یوم آزادی پر مقبوضہ کشمیر میں یوم سیاہ

سری نگر(مانیٹرنگ ڈیسک) بھارت کے یوم آزادی پر مقبوضہ کشمیر میں یوم سیاہ منایا جا رہا ہے اور کاروبار زندگی معطل ہے۔ کشمیری میڈیا سروس کے مطابق مشترکہ مزاحمتی قیادت کی کال پر آج مقبوضہ وادی میں مکمل شٹر ڈاؤن ہڑتال اور احتجاج کیا جائے گا جب کہ بھارت مخالف احتجاج روکنے کے لیے قابض انتظامیہ نے وادی کو فوجی چھاؤنی میں تبدیل کردیا۔

حریت رہنما سید علی گیلانی، میرواعظ عمر فاروق اور یاسین ملک کی جانب سے احتجاج کی کال کے بعد سری نگر سمیت وادی بھر میں تمام چھوٹی بڑی دکانیں، بازار اور اسکولز بند ہیں جب کہ سڑکوں پر ٹریفک بھی معمول سے کم ہے۔

دوسری جانب وادی میں بھارتی فوج، پیراملٹری اور پولیس اہلکاروں کی بڑی تعداد تعینات کردی گئی ہے اور بلند عمارتوں پر شارپ شوٹر بھی تعینات ہیں۔عوام کی نقل و حرکت پر نظر رکھنے کے لیے حساس مقامات پر سی سی ٹی وی کیمرے بھی نصب کیے گئے ہیں جب کہ حکام نے مقبوضہ وادی میں موبائل فون اور انٹرنیٹ سروس بھی معطل کردی۔

یہ بھی دیکھیں

خاشقجی کو ولیعہد محمد بن سلمان کے حکم پر قتل کیا گیا،اعلیٰ سعودی حکام کی کال ٹریس

واشنگٹن (مانیٹرنگ ڈیسک)نیویارک ٹائمز نے فاش کیا ہے کہ ترک تفتیش کاروں نے صحافی خاشقجی ...