پیر , 24 ستمبر 2018

امریکا نے چین اور روس کی متعدد کمپنیوں کو بلیک لسٹ کر دیا

واشنگٹن (مانیٹرنگ ڈیسک) امریکی محکمہ خزانہ نے شمالی کوریا پر عائد اقتصادی پابندیوں کی خلاف ورزی کرنے پر متعدد روسی اور چینی کمپنیوں کو بلیک لسٹ کر دیا۔ غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق امریکا نے شمالی کوریا کے ایٹمی پروگرام کو ختم کرنے کے لیے اس پر دباؤ برقرار رکھنے کی پالیسی کے تحت یہ اقدام اٹھایا۔ امریکی حکومت نے چینی کمپنی ڈالیان سن مون اسٹار اور اس کی ذیلی کمپنی سنسمس پر الزام لگایا کہ انہوں نے جعلی دستاویزات کے ذریعے شراب اور سگریٹ کی کھیپ شمالی کوریا کو برآمد کی۔ محکمہ خزانہ نے دعویٰ کیا کہ سگریٹ کی اس غیر قانونی تجارت کے ذریعے شمالی کوریا کی حکومت سالانہ ایک ارب ڈالر کماتی ہے۔

واشنگٹن نے اقوام متحدہ کی پابندیوں کی خلاف ورزی کے الزام میں روس کی کمپنی پروفینیٹ کو بھی بلیک لسٹ کر دیا۔ ڈونلڈ ٹرمپ انتظامیہ نے الزام لگایا کہ پروفینیٹ نے روس کی تین بندرگاہوں پر شمالی کوریا کے بحری جہازوں کو مال چڑھانے اور ایندھن بھرنے کی سہولیات فراہم کیں۔

امریکا اور شمالی کوریا کے درمیان طویل عرصے سے تعلقات منقطع تھے تاہم حال ہی میں دونوں ممالک کے درمیان برف پگھلی ہے۔ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ اور شمالی کوریا کے سربراہ کم جونگ ان کے درمیان سنگاپور میں تاریخی ملاقات بھی ہوئی، جب کہ شمالی کوریا نے اپنے ایٹمی پروگرام کو ختم کرنے کا اعلان بھی کیا۔ اس سے امید پیدا ہو چلی تھی کہ اب شاید شمالی کوریا دنیا میں تنہائی سے نکل کر مرکزی دھارے میں واپس آ جائے، تاہم ایسا محسوس ہوتا ہے کہ اس کے معاملات کی مکمل بحالی میں کافی وقت لگے گا۔

یہ بھی دیکھیں

نیب نے تنقید سے بچنے کیلئے ’نامکمل‘ کارکردگی رپورٹ جاری کردی

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) ایون فیلڈ ریفرنس میں شریف خاندان کی رہائی پر تنقید کا ...