پیر , 10 دسمبر 2018

عسکری قیادت سے بات چیت ضروری ہے، انجینئر رشید

سری نگر (مانیٹرنگ ڈیسک) جموں و کشمیر عوامی اتحاد پارٹی کے سربراہ انجینئر رشید نے کہا کہ خون خرابہ کسی کے لئے بھی فائدہ مند نہیں لیکن اس سے روکنا ہر حال میں ہندوستان ہی کے دائرہ اختیار میں ہے۔

ذرائع ابلاغ کے نمائندوں کے ساتھ گفتگو کرتے ہوئےانجینئر رشید نے اس بات کو دہرایا ہے کہ کشمیر میں خون خرابہ روکنے کی کنجی نئی دہلی کے پاس ہے اور اس کا واحد طریقہ عسکری قیادت، پاکستان اور جائز سیاسی قیادت کو بلا شرط مذاکرات کیلئے دعوت دینے میں مضمر ہے۔

ہائیر سکینڈری سکول ہندواں پورہ لنگیٹ میں سالانہ تقریب میں شرکت کے بعد ذرائع ابلاغ کے نمائندوں کے ساتھ گفتگو کرتے ہوئے انجینئر رشید نے کہا کہ خون خرابہ کسی کے لئے بھی فائدہ مند نہیں لیکن اس سے روکنا ہر حال میں ہندوستان ہی کے دائرہ اختیار میں ہے۔

انجینئر رشید نے چین کے زنگ یانگ اور اگیار خطوں میں لاکھوں مسلمانوں پر چینی حکومت کی طرف سے مظالم ڈھائے جانے کی کارروائیوں کے متعلق ایمنسٹنی انٹرنیشنل کے سخت بیان کو حوصلہ افزاء قرار دیتے ہوئے پاکستانی حکومت سے مطالبہ کیا کہ وہ زنگ یانگ کے مسلمانوں پر ڈھائے جانے والے مظالم پر خاموشی توڑ دے۔

انہوں نے کہا کہ جہاں کشمیر اور دیگر متنازعہ علاقوں میں پاکستان کی حکومت کا مظلوموں کے حق میں آواز اٹھانا ہر جگہ باعث تعریف سمجھا جاتا ہے وہاں پاکستانی حکومت کو یہ بات ذہن میں رکھنی ہوگی کہ دنیا بھر کے مظلوم مسلمانوں کی کافی امیدیں پاکستان سے وابستہ ہیں اور چین کے بے بس مسلمان اس سے ہرگز مستثنٰی نہیں ٹھہرائے جا سکتے۔

یہ بھی دیکھیں

82 سال پرانا ریکارڈ یاسرشاہ کی جھولی میں گرنے کو تیار

دبئی(مانیٹرنگ ڈیسک) 82 سال پرانا اہم ترین ٹیسٹ ریکارڈ بھی یاسر شاہ کی جھولی میں ...