پیر , 19 نومبر 2018

حکومت بنتے ہی 10 دنوں میں کسانوں کا قرض معاف کر دیں گے: راہول گاندھی

نئی دہلی (مانیٹرنگ ڈیسک) بھارت میں کانگریس میں حکومت تشکیل دینے کی صورت میں دس دنوں کے اندر کسانوں کا قرض معاف کرنیکا اعلان کر دیا۔ مدھیہ پردیش میں حکومت بنتے ہی 10 دنوں میں کسانوں کا قرض معاف کر دیں گے۔ کانگریس کے صدرراہول گاندھی کا کہنا ہے کہ مدھیہ پردیش میں کانگریس کی حکومت بنتے ہی 10 دنوں میں کسانوں کا قرض معاف کر دیں گے۔ راہول گاندھی کا کہنا ہے کہ میں صرف ایک بار وزیر اعظم کے دفتر گیا ہوں، وہ بھی صرف کسانوں کے قرض کی معافی کی بات کرنے کے لئے لیکن اس بات کا بھی وزیراعظم نے کوئی جواب نہیں دیا۔

راہول گاندھی کا کہنا تھا کہ میں میں عوام سے کوئی بھی جھوٹا وعدہ نہیں کروں گا کہ میں عوام کے اکاؤنٹ 15 15 لاکھ روپے ڈال دوں گا۔ راہول گاندھی نے پیرکے روزمدھیہ پردیش میں ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ 70 سال قبل ملک غربت تھی یہاں روزگار نہیں تھا، سڑکیں، کالج، اسپتال نہیں تھے۔ ہندوستان کو یہاں تک پہنچانے میں کسانوں کا بہت بڑا ہاتھ ہے۔

آج ہندوستان اتنا آگے تک پہنچ گیا ہے کہ امریکا کے سابق صدر اوباما نے کہا تھا کہ صرف ہندوستان اور چین ہی ایسے ملک ہیں جو امریکہ کا مقابلہ کر سکتے ہیں۔ وزیر اعظم نریندر مودی نے 15 اگست کی تقریرمیں کہا تھا کہ میرے وزیر اعظم بننے سے قبل ملک بے حال تھا ایسا کہہ کر وہ ملک کی توہین کر رہے ہیں۔ راہول گاندھی نے کہا کہ کسان اپنا قرض معاف کرنے کا مطالبہ کر رہے ہیں۔ من موہن سنگھ کے دورِحکومت میں کسانوں کا 70 ہزارکروڑ روپے کا قرض معاف کیا گیا تھا۔

انہوں نے مزید کہا کہ اگر ہماری حکومت آتی ہے تو 10 دن کے اندر کسانوں کا قرض معاف کر دیں گے۔ یاد رہے کہ راہول گاندھی انڈین نیشنل کانگریس کے صدر ہیں ۔

یہ بھی دیکھیں

نوجوان خواتین ہارٹ اٹیک کا زیادہ شکار ہونے لگیں

لندن (مانیٹرنگ ڈیسک)اگرچہ ماضی میں خیال کیا جاتا تھا کہ دل کا امراض عمر رسیدہ ...