اتوار , 20 اکتوبر 2019

اتفاق رائے سے قومی حکومت کی تشکیل کے لیے تیار ہیں:حماس

17

اسلامی تحریک مزاحمت ’’حماس‘‘ ایک بار پھر فلسطین میں مخلوط قومی حکومت کی تشکیل کا مطالبہ کرتے ہوئے تمام فلسطینی سیاسی جماعتوں سے ہنگامی سیاسی اجلاس منعقد کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔

 حماس کے ترجمان سامی ابو زھری نے اپنے ایک بیان میں فلسطینی اتھارٹی پر زور دیا کہ وہ فلسطین میں تمام نمائند فلسطینی قوتوں پر مشتمل قومی حکومت کی تشکیل کی راہ میں حائل رکاوٹیں دور کرے۔ فلسطین میں سیاسی جماعتوں کے خلاف جاری امتیازی سلوک پرمبنی پالیسی ترک کی جائے اور غزہ کی پٹی کے عوام کو مساوی حقوق فراہم کیے جائیں۔

انہوں نے کہا کہ فلسطین میں قوم کی جانب سے دی گئی قربانیوں کے مطابق سیاسی فیصلے کیے جائیں۔ اس حوالے سے حماس کا اہم ترین مطالبہ یہ ہے کہ فلسطینی تھارٹی اسرائیلی ریاست کے ساتھ جاری فوجی تعاون ختم کرے۔

حماس کے ترجمان کا کہنا تھا کہ فلسطین میں تمام جماعتوں کی نمائندگی پر مشتمل قومی حکومت کی تشکیل وقت کی اہم ضرورت ہے۔ اس مقصد کے لیے تمام سیاسی جماعتوں کوسنجیدگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے قومی حکومت کے لیے اپنی ذمہ داریاں ادا کریں۔ انہوں نے کہا کہ فلسطین میں قومی حکومت کی تشکیل کے لیے فضاء سازگار بنانے کی اشد ضرورت ہے۔ سامی ابو زھری کا کہنا تھا فلسطین میں سنہ 2007 ء میں طے پائے سیاسی فارمولے کے مطابق مفاہمت کا عمل آگے بڑھایا جائے۔

یہ بھی دیکھیں

جاپان: خوفناک سمندری طوفان میں 65 ہلاکتوں کی تصدیق

ٹوکیو: جاپان کے وسطی اور شمالی علاقوں میں آنے والے تباہ کن سمندری طوفان ‘ہیگی …