ہفتہ , 15 دسمبر 2018

لیبیا پر حملہ: نٹیو نے سلامتی کونسل کو دھوکہ دیا، روسی وزیر اعظم

ماسکو (مانیٹرنگ ڈیسک)روس کے وزیر اعظم نے کہا ہے کہ نیٹو نے لیبیا پر حملے کے معاملے میں سلامتی کونسل کے ارکان کو دھوکہ دیا تھا۔اٹلی کے شہر پالیرمو میں لیبیا کے بارے میں منعقدہ عالمی کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم دیمتری میدویدیف نے لیبیا پر حملے کو سنگین غلطی قرار دیا۔

روسی وزیراعظم نے کہا کہ لیبیا پر نیٹو کا حملہ سنگین غلطی ہی نہیں بلکہ دنیا کی اخلاقی اور سیاسی قیادت کا دعوی کرنے والوں کی جانب سے بولا جانے والے گھناؤنا جھوٹ بھی تھا۔ انہوں نے واضح کیا کہ اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل نے لیبیا کے خلاف جو پابندیاں عائد کی تھیں ان کا مقصد تشدد کو روکنا اور حالات کو سازگار بنانا تھا لیکن ایسا ممکن نہیں ہو سکا۔

میدویدیف نے کہا کہ روس شروع ہی سے اس بات پر زور دیتا آیا ہے کہ لیبیا کے معاملے کو اس ملک کے سیاسی دھڑوں کے درمیان مذاکرات کے ذریعے حل کیا جانا چاہیے۔روسی وزیر اعظم نے مزید کہا کہ نیٹو کے رکن ملکوں نے مذاکرات میں مشارکت کے بجائے سلامتی کونسل کی قراردادوں کو پامال کرتے ہوئے اقوام متحدہ کے ایک خود مختار رکن ملک پر فوجی حملہ کیا تھا۔

یہ بھی دیکھیں

آئندہ پانچ ماہ میں پاک بھارت جنگ چھڑ سکتی ہے ، بھارتی صحافی

ممبئی (مانیٹرنگ ڈیسک) بھارت میں انتخابات سے قبل پاک بھارت جنگ چھڑ سکتی ہے ، ...