جمعہ , 14 دسمبر 2018

نیتن یاہو نے فلسطینیوں کے سامنے گھٹنے ٹیک دیے، لیبرمین

یروشلم (مانیٹرنگ ڈیسک)اسرائیلی وزیراعظم نیتن یاہو نے وزیر جنگ کے مستعفی ہونے پر وزارت جنگ کا قلمدان خود سنبھال لیا ہے۔عالمی خبررساں ایجنسی کے مطابق اسرائیلی وزیر جنگ اویگڈور لیبرمین نے غزہ سیز فائر معاہدے کے خلاف اپنا استعفیٰ احتجاجاً پیش کرتے ہوئے کہا ہے کہ اسرائیلی وزیراعظم نیتن یاہو نے فلسطینیوں کے سامنے گھٹنےٹیک دیے ہیں۔اسرائیل کے وزیرجنگ نے اپنا استعفیٰ پیش کرتے ہوئے واضح کیا کہ ان کی پارٹی ’اسرائیل بیتینو‘ وزیراعظم کے ساتھ قائم سیاسی اتحاد سے علیحدگی اختیار کر رہی ہے۔

خبررساں ایجنسی کے مطابق انہوں نے قبل از وقت انتخابات کرانے کا مطالبہ کرتے ہوئے امید ظاہر کی کہ آئندہ اتوار تک قبل از وقت انتخابات کی تاریخ طے کرلی جائے گی۔عالمی خبررساں ایجنسی کے مطابق اویگڈور لیبرمین کی سیاسی جماعت سمیت حکومتی اتحاد سے علیحدگی کے سبب وزیراعظم کو پارلیمنٹ میں صرف ایک نشست کی اکثریت حاصل رہ گئی ہے جو اس بات کی غماز ہے کہ حکومت سیاسی اور عددی اعتبار سے مشکلات کا شکار ہے۔

قواعد و ضوابط کے مطابق اسرائیل میں انتخابات کا انعقاد نومبر 2019 میں ہونا ہیں۔ عالمی سیاسی مبصرین کا مؤقف ہے کہ اویگڈور لیبرمین کے استعفیٰ کے بعد ملک میں قبل از وقت انتخاب کے امکانات بہت زیادہ بڑھ گئے ہیں۔اسرائیل کے وزیراعظم نیتن یاہو نے حماس کے ساتھ سیز فائر معاہدے کا دفاع کیا ہے۔

یہ بھی دیکھیں

لبنان پر پابندیوں کا اسرائیلی مطالبہ امریکا نے مسترد کردیا

واشنگٹن (مانیٹرنگ ڈیسک)اسرائیل نے امریکا سے لبنان پر اقتصادی پابندیوں کا مطالبہ کیا ہے تاہم ...