اتوار , 16 اگست 2020

جرمن پارلیمنٹ نے آرمینیوں کے قتل عام کو نسل کشی قرار دیدیا

German Parliament

برلن (مانیٹرنگ ڈیسک) جرمن پارلیمنٹ نے جمعرات کو ایک علامتی قرارداد کو اکثریت کے ساتھ پاس کردیا جس میں یہ کہا گیا ہے کہ ۱۹۱۵ عیسوی میں عثمانی فوج نے آرمینیوں کی نسل کشی کی تھی۔ذرائع کے مطابق، پناہ گزینوں کے بارے میں یورپی یونین اور ترکی کے درمیان ہونے والے مذاکرات میں جرمنی کو کلیدی کردار حاصل ہے۔ دوسری طرف ترکی کو خبردار کیا ہے کہ آرمینیوں کے قتل عام کو نسل کشی قرار دینے سے جرمنی اور ترکی کے مابین تعلقات خراب ہوسکتے ہیں۔واضح رہے اس قرارداد کے پاس ہونے کے بعد ترکی نے ملک میں موجود جرمن سفیر کو طلب کرلیا تھا۔ دوسری طرف انجیلا مرکل کا کہنا ہے کہ جرمنی ترکی کے ساتھ وسیعے اور مضبوط تعلقات چاہتا ہے۔

یہ بھی دیکھیں

جلال آباد میں جیل پر داعش کے حملے میں کم سے کم 22 افراد ہلاک

جلال آباد: افغانستان کے مشرقی شہر جلال آباد میں جیل پر داعش کے حملے میں …