بدھ , 21 اپریل 2021

سعودی حکومت ریاض میں ‘انٹرٹینمنٹ کمپلیکس’ تعمیر کرے گی

ریاض (مانیٹرنگ ڈیسک)سعودی عرب نے دارالحکومت ریاض میں دیوہیکل انٹرٹینمنٹ کمپلیکس کی تعمیر کا اعلان کردیا جس میں کئی سنیما، لائیو پرفارمنسز کے مقامات اور کھیل کی سہولیات میسر ہوں گی۔عرب نیوز کی رپورٹ کے مطابق ایک لاکھ اسکوائر میٹر رقبے پر پھیلے اس کمپلیکس کی تعمیر ‘پبلک انویسٹمنٹ فنڈ’ کی ذیلی کمپنی ‘سعودی انٹرٹینمنٹ وینچرز کمپنی (سیون)’ کرے گی۔سعودی عرب کے ‘ویژن 2030’ اصلاحاتی منصوبے کے تحت انٹرٹینمنٹ شعبے میں اعلان کردہ یہ تازہ ترین پراجیکٹ ہے۔

سیون کے چیئرمین عبداللہ بن ناصر الداؤد نے کہا کہ ‘منصوبے کا ڈیزائن انتہائی منفرد ہوگا جس میں سرسبز اور کھلے مقامات ہوں گے۔’انہوں نے کہا کہ ‘کمپلیکس میں متعدد مقامی اور بین الاقوامی ریسٹورنٹ ہوں گے جبکہ کمپلیکس میں سعودی افراد کے ساتھ ساتھ سیاح بھی آسکیں گے۔’

یاد رہے کہ ‘سیون’ کا قیام گزشتہ سال عمل میں آیا تھا اور ابتدائی طور پر اس کے لیے 10 ارب سعودی ریال (2.67 ارب ڈالر) مختص کیے گئے تھے، جبکہ کمپنی کو چلانے کے لیے ڈزنی کے ایگزیکٹو بِل ارنِسٹ خدمات حاصل کی تھی۔سعودی پریس ایجنسی کی رپورٹ میں کہا گیا کہ کمپنی، تفریح کے لیے آئندہ سالوں میں ملک بھر میں کئی سینٹرز قائم کرنے کا ارادہ رکھتی ہے۔

رپورٹ کے مطابق ان منصوبوں سے سالانہ 5 کروڑ افراد کو تفریح کی سہولت میسر آئے گی، 22 ہزار سے زائد ملازمتیں فراہم کی جائیں گی جبکہ 2030 تک ان منصوبوں سے سعودیہ کی معیشت کو 8 ارب ریال حاصل ہوں گے۔یہ دیوہیکل انٹرٹینمنٹ کمپلیکس ریاض کے مشرقی رِنگ روڈ پر قائم کیا جائے گا۔

یہ بھی دیکھیں

ایران و چین معاہدے پر امریکہ چراغ پا

امریکی صدر نے ایران اور چین کے 25 سالہ معاہدے پر سخت تشویش کا اظہار …