اتوار , 17 فروری 2019

ملک میں بیروزگاروں کی تعداد میں خطرناک حد تک اضافہ، ادارہ شماریات

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) وفاقی ادارہ شماریات نے لیبرفورس سروے رپورٹ 2017-2018 جاری کردی ہے جس کے مطابق پاکستان میں بیروزگار افراد کی تعداد میں ایک لاکھ 70 ہزار کا اضافہ ہوا ہے۔رپورٹ کے مطابق پاکستان میں بیروزگاروں کی تعداد میں حالیہ اضافہ کے بعد بیروزگار افراد کی تعداد بڑھ کر 37 لاکھ 90 ہزار ہوگئی ہے۔

صوبوں کے حوالے سے وفاقی ادارہ شماریات کی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ اس وقت پنجاب میں 23 لاکھ 90 ہزار، سندھ میں 7 لاکھ 50 ہزار، خیبر پختونخوا میں 5 لاکھ 50 ہزار جبکہ بلوچستان میں ایک لاکھ 10 ہزار افراد بیروزگار ہیں۔

رپورٹ میں مزید بتایا گیا ہے کہ پاکستان میں 2015 میں بیروزگار افراد کی تعداد 36 لاکھ 20 ہزار تھی، 2015 کے مقابلے میں بیروزگاری کی شرح میں 0.1 فیصد کی معمولی کمی ہوئی ہے۔پاکستان میں اس وقت بیروزگاری کی شرح 5.9 سے کم ہوکر 5.8 فیصد ہوگئی ہے۔

رپورٹ میں مزید کہا گیا ہے کہ ملک میں شادی شدہ اور بیواؤں کی تعداد میں اضافہ ہوا ہے، شادی شدہ افراد کی تعداد 52.6 سے بڑھ کر 53.5 فیصد ہوگئی۔علاوہ ازیں ملک میں بیواؤں اور رنڈوؤں کی تعداد 3.6 فیصد سے بڑھ کر 3.9 فیصد ہوگئی ہے، اس کے علاوہ کبھی شادی نہ کرنے والے افراد کی تعداد 42.3 فیصد ہے۔

رپورٹ کے مطابق ملک میں شرح خواندگی کی شرح 60.7 فیصد سے بڑھ کر 62.3 فیصد ہوگئی ہے جب کہ ناخواندہ افراد کی شرح کم ہوکر37.9 فیصد رہ گئی ہے۔رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ پاکستان میں 36.9 فیصد لوگ میٹرک سے کم تعلیم رکھتے ہیں اور صرف 6 فیصد لوگوں کے پاس ڈگری یا اس سے زائد کی تعلیم ہے۔

وفاقی ادارہ شماریات کی تازہ ترین رپورٹ کے مطابق ملک میں لیبرفورس کی تعداد 6 کروڑ55 لاکھ ہے جو 2015 میں 6 کروڑ 10 لاکھ تھی۔پاکستان میں 6 کروڑ 17 لاکھ افراد کے پاس روزگار موجود ہے اور یہ تعداد 2015 میں 5 کروڑ 74 لاکھ تھی۔

صوبہ پنجاب میں سب سے زیادہ 3 کروڑ 76 لاکھ افراد کے پاس روزگار ہے جب کہ سندھ میں ایک کروڑ 44 لاکھ، خیبرپختونخوا میں 71 لاکھ اور بلوچستان میں 25 لاکھ لوگ برسر روزگار ہیں۔

یہ بھی دیکھیں

بھارتی جاسوس کلبھوشن یادیو کے کیس کی سماعت تاریخ عالمی عدالت میں مقرر

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) عالمی عدالت انصاف نے بھارتی جاسوس کلبھوشن یادیو کے کیس کی سماعت ...