پیر , 21 جون 2021

طالبان کا افغان انٹیلی جنس بیس پر حملہ، 126 اہلکار ہلاک

کابل(مانیٹرنگ ڈیسک) طالبان نے افغان انٹیلی جنس ایجنسی کی بیس پر حملہ کر دیا جس کے نتیجے میں 126 اہلکار ہلاک اور متعدد زخمی ہو گئے۔غیرملکی خبر رساں ادارے کے مطابق افغانستان کے مشرقی صوبہ وردک میں طالبان نے انٹیلی جنس کی بیس پر صبح سویرے حملہ کیا جس کے نتیجے میں ابتدائی طور پر فوج کے 12 اہلکاروں کی ہلاکت اور 30 سے زائد کے زخمی ہونے کی اطلاعات ملیں۔

بعد ازاں افغان حکام نے بتایا کہ حملے میں کم از کم 126 اہلکار ہلاک اور متعدد زخمی ہوئے ہیں۔طالبان نے افغان انٹیلی جنس کی اُس بیس کو نشانہ بنایا جہاں پولیس اہلکاروں کو بھی تربیت دی جاتی تھی۔

وزارت داخلہ کے نائب ترجمان نصرت رحیمی کے مطابق کار میں سوار خود کش بمبار نے ملٹری بیس کے مرکزی دروازے کے قریب گاڑی کو دھماکا خیز مواد سے اڑایا جس کے بعد دیگر دو حملہ آوروں نے اہلکاروں پر فائرنگ کی۔

ترجمان نے بتایا کہ دو طرفہ فائرنگ کے تبادلے میں دونوں حملہ آور مارے گئے تاہم انہوں نے طالبان کے حملے میں مارے جانے والے اہلکاروں کی تعداد کے بارے میں نہیں بتایا۔

دوسری جانب طالبان ترجمان ذبیح اللہ مجاہد نے انٹیلی جنس بیس پر حملے کی ذمہ داری قبول کرلی۔پبلک ہیلتھ ڈیپارٹمنٹ کے سربراہ سلیم اصغر خیل نے کہا کہ حملے میں زخمی ہونے والے اہلکاروں کو مختلف اسپتالوں میں منتقل کردیا گیا ہے جب کہ تشویشناک حالت میں مبتلا زخمیوں کو علاج کیلیے کابل منتقل کیا گیا ہے۔

یہ بھی دیکھیں

گورنر سندھ کا وزیراعظم سے آئی جی سندھ کو عہدے سے ہٹانے کا مطالبہ

کراچی: سندھ کے گورنر عمران اسمٰعیل نے وزیراعظم عمران خان سے ملاقات کرکے سندھ پولیس …