اتوار , 11 اپریل 2021

خاتون صحافی مرضیہ ہاشمی کی گرفتاری ناکام امریکی خارجہ پالیسی کی علامت ہے:روسیہ الیوم

ماسکو (مانیٹرنگ ڈیسک)روس کے سرکاری نیوز ایجنسی روسیہ الیوم کے سینئر عہدیدار نے کہا ہے کہ ایرانی نیوز ایجنسی پریس ٹی وی کی صحافی مرضیہ ہاشمی کی بلاجواز گرفتاری امریکی خارجہ پالیسی کی ناکامی کی علامت ہے ۔ ایرانی ذرائع ابلاغ کےساتھ انٹرویو میں ’’دیمتری کیسل یوف‘‘نےکہاکہ ایرانی نیوز ایجنسی پریس ٹی وی کی صحافی مرضیہ ہاشمی کی بلاجواز گرفتاری امریکی خارجہ پالیسی کی ناکامی کی علامت ہے ۔

انہوں نے امریکہ کے اس اشتعال انگیز اقدام کی پرزور الفا ظ میں مذمت کرتے ہوئے کہاکہ امریکہ ایران کے مقابلے میں ذلت آمیز شکست کھاچکا ہے اوروہ اس لئےایسے قابل مذمت اقدام اُٹھارہا ہے ۔

انہوں نے کہاکہ دنیا کی آزاد وخودمختاری ریاست کے ساتھ کیسابرتاؤکیا جائے امریکی حکام ان اخلاق سے عاری ہے اوروہ عام شہریوں سے اس لئے انتقام لے رہے ہیں۔انہوں نے کہاکہ امریکہ دنیابھر کے ممالک کی شخصیات کوگرفتار کرکے ان کی پا لیسیوں پر اثرانداز ہونے کی ناکام کوشش کررہا ہے۔

انہوں نے کہاکہ امریکی حکام نے انہیں ایک ایرانی اور ایک مسلمان ہونے اور پریس ٹی وی کےساتھ کام کرنے کی بناپر گرفتار کیا ہے۔انہوں نے کہاکہ دنیا بھر کے آزاد میڈیا کو مرضیہ ہاشمی کی رہائی کیلئے آگے آنا چاہئے ۔

واضح رہے کہ مرضیہ ہاشمی کو گذشتہ ہفتے سینٹ لوئس لبرٹ بین الاقوامی آئیرپورٹ پر گرفتارکرلیاگیا تھا جس کے بعد امریکی تفتیشی ایجنسی ایف بی آئی کے اہلکاروں نے انہیں واشنگٹن میں موجود جیل میں منتقل کردیاتھا ۔

خاتون رپورٹر کے اہلخانہ 48گھنٹوں تک ان کی صورتحال سے لاعلم رہے جبکہ کچھ دن گذرنے کے بعد اہلخانہ کو ان کی گرفتاری سے مطلع کیاگیا۔پریس ٹی وی کےمطابق مرضیہ ہاشمی نے اپنے اہلخانہ کو بتایا کہ پولیس نے ان کےساتھ توہین آمیز رویہ اپنایا اوران کےسرسے حجاب بھی اُتاراگیا۔

یہ بھی دیکھیں

ایران و چین معاہدے پر امریکہ چراغ پا

امریکی صدر نے ایران اور چین کے 25 سالہ معاہدے پر سخت تشویش کا اظہار …