ہفتہ , 24 اگست 2019

عرب اتحاد بچوں اور عام شہریوں کی سلامتی یقینی بنائے گا: عادل الجبیر

181768_331

ریاض(مانیٹرنگ ڈیسک) سعودی عرب کے وزیر خارجہ عادل الجبیر نے کہا ہے کہ اقوام متحدہ کی جانب سے یمن میں انسانی حقوق کی پامالیوں میں ملوث گروپ سے عرب اتحاد کا نام نکال کر یہ ثابت کیا ہے کہ سعودی عرب اور اس کے اتحادی یمن میں بچوں اور عام شہریوں کے حقوق پامال نہیں کر رہے ہیں۔ اقوام متحدہ کے فیصلے سے یہ بھی ظاہر ہو رہا ہے کہ یمن میں انسانی حقوق کی پامالیوں کے بارے میں عرب ممالک پر جو الزامات عائد کیے گئے تھے ان کا حقائق سے کوئی تعلق نہیں۔ عرب ٹی وی کے مطابق ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے سعودی وزیرخارجہ کا کہنا تھا کہ سعودی عرب کی قیادت میں یمن میں آئینی حکومت کی بحالی کے لیے جاری آپریشن میں عام شہریوں کا تحفظ یقینی بنایا گیا ہے اور آئندہ بھی عرب اتحاد بچوں اور عام شہریوں کی سلامتی کو یقینی بنانے کے لیے ہرممکن اقدام کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ سعودی عرب اور اس کی قیادت میں یمن میں باغیوں کے خلاف نبرد آزما ممالک امدادی آپریشنز میں بھی سب سے آگے ہیں۔ یاد رہے کہ چند روز قبل سعودی عرب اور اس کے اتحادیوں کو اقوام متحدہ کی جانب سے یمن میں انسانی حقوق کی پامالیوں اور یمن کے بچوں کا قتل عام کرنے کی وجہ سے ان کا نام اقوام متحدہ کی بلیک لسٹ میں شامل کردیاگیا تھا جس کا بہت زیادہ خیر مقدم کیا گیاتھا مگر محض ایک دن کے بعد اقوام متحدہ نے سعودی عرب اور اس کے اتحادیوں کو نام لسٹ سے خارج کر دیئے جس کی وجہ سے سعودی عرب کی اقوام متحدہ کو دہمکیاں اور لابنگ بتائی جارہی ہے۔

یہ بھی دیکھیں

ایران یک طرفہ طور پر ایٹمی معاہدے کی پابندی کا سلسلہ جاری نہیں رکھ سکتا، صدر حسن روحانی

تہران (مانیٹرنگ ڈیسک)صدر مملکت حسن روحانی نے ایٹمی معاہدے پر عملدرآمد کی سطح میں کمی …