بدھ , 21 اپریل 2021

طورخم باڈر 24 گھنٹے کھلا رکھا جائے گا:حکومت پاکستان

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)  حکومت پاکستان نے فیصلہ کیا ہے کہ آئندہ چھ ماہ میں پاک افغان طورخم بارڈر چوبیس گھنٹے آمدورفت کے لیے کھول دیا جائے گا۔ وزیراعظم عمران خان نے اس حوالے سے تمام متعلقہ اداروں کو اقدامات کی ہدایت کر دی ہے۔حکومت کا افغانستان کیساتھ دو طرفہ تجارت بڑھانے کا فیصلہ، وزیراعظم عمران خان کی چھ ماہ میں طورخم باڈر 24 گھنٹے کھلا رکھنے کے لیے اقدامات کی ہدایت، بارڈر پر مسلسل آمدورفت سے باہمی تجارت کو فروغ ملے گا۔

وزیراعظم عمران خان کے احکامات کی روشنی میں مشیر شہزاد ارباب کے زیر صدارت اجلاس ہوا۔ شرکا کو بتایا گیا کہ طورخم بارڈر ہر قسم کی ترسیل کیلئے 8 سے 10 گھنٹے کھلا رہتا ہے۔

اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ وزیراعظم کے ویژن کے مطابق چھ ماہ بعد طورخم بارڈر چوبیس گھنٹے کھلا رہے گا۔ تمام سٹیک ہولڈرز اس حوالے سے اقدامات بروقت یقینی بنائیں۔شہزاد ارباب نے کہا کہ پاک افغان بارڈر پر بلا تعطل آمدورفت سے جہاں دونوں طرف کے عوام کے مسائل حل ہوں گے، وہیں پاک افغان تعلقات میں بھی نمایاں بہتری آئے گی۔

یہ بھی دیکھیں

میزائل تجربے پر تنقید : شمالی کوریا نے اقوام متحدہ پر چڑھائی کردی

شمالی کوریا نے میزائل ٹیسٹ کے بعد پابندیوں کی تجویز پر اقوام متحدہ پر چڑھائی …