پیر , 12 اپریل 2021

قبائلی اضلاع کی تاریخ میں پہلی مرتبہ ڈرائیونگ لائسنس کا اجراء

پشاور(مانیٹرنگ ڈیسک)خیبرپختونخوا ٹریفک پولیس کی جانب سے ضم شدہ قبائلی علاقوں میں تاریخ میں پہلی بار شہریوں کے ڈرائیونگ لائسنس بنائے جائیں گے اور اس مقصد کیلئے ٹریفک پولیس کے اہلکار ہر علاقے میں موبائل کیمپ لگائے گی۔

ایس ایس پی ٹریفک کاشف ذوالفقار نے کہا ہے کہ پہلے مرحلے میں ضلع خیبر کی تحصیل جمرود میں ڈرائیونگ لائنس بنانے کی سہولت فراہم کی جائے گی۔ ڈارئیونگ لائنس کے اجرا کے لئے تمام تیاریاں مکمل ہیں اور ایک اسپیشل ٹیم بھی تیا رہوچکی ہے۔انہوں نے بتایا کہ عوام کی آسانی کے لئے انکو گھر کی دھلیز پر ہی موبائیل وین کے ذریعے ڈررائیونگ لائنس حاصل کرنے کی سہولت میسر ہوگی۔

وزیر اطلاعات خیبر پختونخوا شوکت یوسفزئی نے کہا ہے کہ فاٹا پولیسنگ کے تحت جو قوانین صوبے میں لاگو ہوتے ہیں وہ تمام قوانین ضم شدہ قبائلی علاقوں میں بھی نافذالعمل ہوں گے۔ قبائلی عوام کے لئے ڈارئیونگ لائنس کا اجرا ان کا حق ہے جو ان کو ملے گا۔فاٹا اضلاع میں پولیس نظام فعال ہونے کے بعد وہاں پولیس فورس کی بھرتی، ٹریفک نظام اور ٹریفک قوانین بھی لاگو ہوں گے۔

یہ بھی دیکھیں

پاکستان جنوبی ایشیا میں امن و استحکام کا خواہاں، عارف علوی

پاکستان کے صدر عارف علوی نے علاقائی تنازعات کے پرامن حل کی ضرورت پر زور …