ہفتہ , 23 فروری 2019

کے پی: مذہبی کتابوں کی پڑھائی مکمل کرنے پر قیدیوں کی سزا میں کمی کا نیا قانون

پشاور(مانیٹرنگ ڈیسک) خیبر پختون خوا میں جیل اصلاحات کے تحت قوانین میں اہم ترمیم کر دی گئی، اس ترمیم کے تحت غیر مسلم قیدیوں کو مذہبی کتابوں کی پڑھائی مکمل کرنے پر سزا میں چھوٹ ملے گی۔تفصیلات کے مطابق خیبر پختون خوا میں پی ٹی آئی حکومت نے غیر مسلم قیدیوں کو خوش خبری دے دی ہے، جیل قوانین میں اصلاحات کے تحت قیدی اگر مذہبی کتابیں پڑھیں گے تو ان کی سزا میں کمی کی جائے گی۔قیدیوں کے اہلِ خانہ مذہبی تہوار جیل میں قیدیوں کے ساتھ منا سکیں گے۔

مذہبی کتابوں کا امتحان پاس کرنے پر 6 ماہ سے لے کر ایک سال تک کی معافی ملے گی۔سپرنٹنڈنٹ جیل نے بتایا کہ غیر مسلموں کو تمام مذہبی رسومات کی ادائیگی کی اجازت ہوگی، قیدیوں کے اہلِ خانہ مذہبی تہوار جیل میں قیدیوں کے ساتھ منا سکیں گے۔

واضح رہے کہ کے پی حکومت نے قبائلی اضلاع میں سِول و سیشن کورٹ کے قیام کی منظوری بھی دے دی ہے۔ابتدائی مرحلے میں سِول و سیشن کورٹ کے لیے اسامیاں پُر کی جائیں گی، کورٹ کے قیام پر سالانہ 545 ملین روپے سے زائد لاگت آئے گی۔سیشن کورٹ کے قیام کا فیصلہ اکتیس جنوری کو پہلی بار قبائلی ضلع میں منعقد ہونے والے کے پی کے کی کابینہ اجلاس میں کیا گیا تھا۔

یہ بھی دیکھیں

تاجر برادری کا بھارتی اشیاء کے بائیکاٹ کا اعلان

کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک) تاجر برادری نے بھارتی اشیا کے بائیکاٹ کے ساتھ آج احتجاج کا اعلان ...