بدھ , 23 اکتوبر 2019

ہزارہ کمیونٹی کا دھرنا ختم کرنے کا اعلان: ذرائع

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) ذرائع کا کہنا ہے کہ وزیر مملکت برائے داخلہ شہریار آفریدی سے ہزارہ کمیونٹی کے مذاکرات کامیاب ہو گئے ہیں۔تفصیلات کے مطابق ذرائع نے کہا ہے کہ وزیر مملکت برائے داخلہ شہریار آفریدی کے ساتھ ہزارہ کمیونٹی کے مذاکرات کام یاب ہو گئے ہیں۔ذرائع نے مزید بتایا کہ ہزارہ کمیونٹی نے دھرنا ختم کرنے کا اعلان کر دیا ہے۔

خیال رہے کہ اس سے قبل وفاقی وزیر نے بلوچستان کے وزیر اعلیٰ جام کمال سے کوئٹہ میں ملاقات کی تھی، جس میں انھوں نے کوئٹہ دھماکے پر ہونے والی تحقیقات کے بارے میں معلومات حاصل کی تھیں۔

یاد رہے کہ 12 اپریل کو ہزار گنجی فروٹ مارکیٹ کے قریب دھماکے میں 20 افراد جاں بحق اور 48 زخمی ہو گئے تھے، دھماکے میں ہزارہ کمیونٹی کو نشانہ بنایا گیا تھا، دھماکا خیز مواد آلوؤ ں میں رکھا گیا تھا، جاں بحق افراد میں سیکورٹی اہل کار بھی شامل تھے جب کہ 8 جاں بحق افراد کا تعلق ہزارہ کمیونٹی سے تھا۔

دھماکے کا مقدمہ سرکاری مدعیت میں نا معلوم افراد کے خلاف درج کیا گیا ہے، جس میں بتایا گیا کہ دھماکا پلانٹڈ نہیں بلکہ خود کش تھا، جائے وقوعہ سے حملہ آور کے اعضا بھی ملے۔دھماکے کے بعد ہزارہ کمیونٹی کے افراد احتجاجاً دھرنے پر بیٹھ گئے تھے، جن کا مطالبہ تھا کہ ہزارہ برادری کے خلاف ہونے والے حملوں کو روکا جائے، اور قاتلوں کو گرفتار کیا جائے۔

یہ بھی دیکھیں

لاہورمیں حضرت داتا گنج بخش کے 976 ویں تین روزہ عرس کا آغاز

لاہور : حضرت داتا گنج بخش کے976ویں عرس کی تقریبات کا آغاز ہوگیا، صوبائی وزیر …