پیر , 10 مئی 2021

امارات میں وزارت ’خوشی‘ کے بعد وزارت ’امکانات متعارف

ابوظہبی (مانیڑنگ ڈیسک)متحدہ عرب امارات (یو اے ای) نے وزارت ’خوشی اور رواداری‘ کے 3 برس بعد ہی وزارت ’امکانات‘ کا اعلان کردیا۔دبئی کے حکمران اور یو اے ای کے وزیراعظم شیخ محمد رشید المختوم نے کہا کہ ’وزارت امکانات غیر روایتی انداز میں فعال ہو گی جس کا کوئی وزیر نہیں ہوگا‘۔انہوں نے بتایا کہ ’وزارت امکانات میں پوری کابینہ اپنا کردار ادا کر سکے گی‘۔

شیخ محمد رشید المختوم نے ٹوئٹ پر کہا کہ ’ہم نے دنیا کی سب سے پہلے ورچوئل وزارت برائے امکانات متعارف کرادی جو یو اے ای حکومت کے انتظامی امور کا حصہ ہوگی‘۔دبئی حکومت کے میڈیا افس کے مطابق وزارت برائے امکانات کے انتطامی امور پوری کابینہ کی ذمہ داری ہوگی جس میں مشاورت کے ذریعے حکومت کے لیے مستقبل کے تناظر میں نظام تیار کرنا ہوگا۔اس حوالے سے شیخ محمود نے کہا کہ ’مسقتل کے چینلجز سے نمٹنے کے لیے حکومتی ڈھانچے میں سلسلہ وار ترقی ضروری ہے اور ناممکن ہماری لغت کا حصہ نہیں‘۔

خیال رہے کہ 9 فروری 2016 میں وزیراعظم نے وزیر مملکت برائے خوشی کا عہدہ تشکیل دیا تھا۔شیخ محمد رشید المختوم نے کہا تھا کہ یہ وزیر سماجی بہبود اور لوگوں میں اطمینان پیدا کرنے کا ذمہ دار ہوگا۔انہوں نے کہا تھا کہ متعدد وزارتوں کو ضم کردیا جائے گا جبکہ انہوں نے حکومتی سروسز کو آؤٹ سورس کرنے کا بھی اعلان کیا تھا۔’ہمیں ایک جوان اور لچکدار حکومت کی ضرورت ہے۔ ہمیں زیادہ وزارتوں کی نہیں ایسے وزراء کی ضرورت ہے جو تبدیلی کے ساتھ خود کو ڈھال سکیں۔’اس کے علاوہ وزیراعظم نے یو اے ای یوتھ کونسل کا بھی اعلان کیا۔

یہ بھی دیکھیں

میزائل تجربے پر تنقید : شمالی کوریا نے اقوام متحدہ پر چڑھائی کردی

شمالی کوریا نے میزائل ٹیسٹ کے بعد پابندیوں کی تجویز پر اقوام متحدہ پر چڑھائی …