اتوار , 9 مئی 2021

آئی ایم ایف کے سابق عہدیدار رضا باقر گورنر اسٹیٹ بینک تعینات

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)وفاقی حکومت نے عالمی مالیاتی ادارے (آئی ایم ایف) کے سابق عہدیدار رضا باقر کو گورنر اسٹیٹ بینک تعینات کر دیا۔وزارت خزانہ کی جانب سے جاری اعلامیے کے مطابق صدر پاکستان نے ڈاکٹر رضا باقر کو تین سال کی مدت کے لیے گورنر اسٹیٹ بینک تعینات کر دیا ہے اور ان کی مدت ملازمت اس وقت شروع ہوگی جس تاریخ کو وہ عہدہ سنبھالیں گے۔ہارورڈ اور بیکر لے یونیورسٹیوں سے تعلیم یافتہ ڈاکٹر رضا باقر 2000 سے آئی ایم ایف کے ساتھ منسلک تھے اور ابھی بطور سینئر ریزیڈنٹ ریپریسنڈیٹیٹو مصر خدمات انجام دے رہے تھے۔

اس کے علاوہ ڈاکٹر رضا باقر آئی ایم ایف مشن رومانیا اور عالمی مالیاتی ادارے کے ڈیپٹ پالیسی ڈویژن کے سربراہ کے طور پر بھی فرائض انجام دے چکے ہیں۔وفاقی حکومت نے احمد مجتبیٰ میمن کو چیئرمین فیڈرل بورڈ آف ریوینیو تعینات کرنے کی منظوری بھی دیدی ہے۔

احمد مجتبیٰ میمن کی تعیناتی کا باقاعدہ نوٹیفکیشن بھی جلد جاری کر دیا جائے گا۔مجتبیٰ میمن کا تعلق پاکستان کسٹمز سروس سے ہے اور وہ ابھی بطور ایڈیشنل سیکریٹری فنانس ڈویژن خدمات انجام دے رہے تھے۔خیال رہے کہ گزشتہ روز گورنر اسٹیٹ بینک طارق باجوہ اور چیئرمین ایف بی آر جہانزیب خان سے استعفیٰ لے لیا گیا تھا۔

یہ بھی دیکھیں

ایران و چین معاہدے پر امریکہ چراغ پا

امریکی صدر نے ایران اور چین کے 25 سالہ معاہدے پر سخت تشویش کا اظہار …