منگل , 11 مئی 2021

انضمام الحق کا وقت پورا ہوا، ورلڈکپ کے بعد عہدے سے ہٹائے جانے کا امکان

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کی سلیکشن کمیٹی اور اس کے چیئرمین انضمام الحق کی جانب سے منتخب کی گئی ورلڈ کپ کے لیے ٹیم ان کا آخری اسائمنٹ تھا جس کے بعد انہیں اس عہدے سے ہٹا دیا جائے گا۔باوثوق ذرائع نےبتایا کہ سابق کپتان کو پی سی بی کی اعلیٰ انتظامیہ کی جانب سے ایک اجلاس کے دوران کہا گیا ہے کہ ان کا وقت پورا ہوگیا۔پی سی بی کی جانب سے انضمام الحق کو یہ آپشن دیا گیا ہے کہ وہ پی سی بی میں دوسرا عہدہ لے کر اپنی ملازمت جاری رکھ سکتے ہیں۔

تاہم چیف سلیکٹر نے پی سی بی کی اس پیشکش کا اب تک کوئی جواب نہیں دیا۔واضح رہے کہ انضمام الحق کو 2016 میں سابق چیئرمین پی سی بی شہریار خان کے دور میں چیف سلیکٹر مقرر کیا گیا تھا جبکہ وہ نجم سیٹھی کے دور میں بھی اپنی ذمہ داریاں نبھاتے رہے۔

پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) چیئرمین عمران خان کے وزیراعظم بننے کے بعد نجم سیٹھی نے بطور چیئرمین پی سی بی استعفیٰ دے دیا تھا جس کے بعد احسان مانی کو نیا چیئرمین مقرر کیا گیا جن کے آنے کے بعد بورڈ میں بڑے پیمانے پر تبدیلیاں دیکھنے میں آئیں۔یہاں یہ بات قابلِ غور ہے کہ احسان مانی کے چیئرمین بننے کے بعد سے لے کر اب تک پاکستان کرکٹ ٹیم کی کارکردگی بالخصوص ایک روزہ کرکٹ میں خراب رہی ہے۔

پاکستان ٹیم کو ایشیا کپ میں بدترین شکست کا سامنا کرنا پڑا جہاں وہ فائنل کے لیے بھی کوالیفائی نہیں کرسکی اور بھارت کے ساتھ ہونے والے اپنے دونوں میچز ہارگئی۔اس کے بعد متحدہ عرب امارات کے بعد پاکستان اور نیزی لینڈ کے درمیان سیریز برابر رہی تھی جبکہ جنوبی افریقہ میں اسے 2-3 سے شکست کا سامنا کرنا پڑا تھا۔

پاکستان سپر لیگ (پی ایس ایل) کے بعد آسٹریلیا کے خلاف ہونے والی 5 میچوں کی سیریز کے دوران انضمام اور سلیکشن کمیٹی نے ٹیم کے 5 اہم کھلاڑیوں کو آرام دینے کا فیصلہ کیا تھا جو ان کے لیے ڈراؤنا خواب ثابت ہوا اور ٹیم کینگروز سے وائٹ واش ہوگئی۔

واضح رہے کہ انضمام اور سلیکشن کمیٹی کا پی سی بی کے ساتھ معاہدہ 30 اپریل کو ختم ہونا تھا تاہم انگلینڈ میں ہونے والے ورلڈ کپ کی وجہ سے اس معاہدے میں 31 جولائی تک کی توسیع کردی گئی تھی۔تاہم انضمام الحق کی بطور چیف سلیکٹر ملازمت میں توسیع کے امکانات بہت ہی کم ہیں۔خیال رہے کہ 2017 میں ہونے والی چیمپیئنز ٹرافی میں پاکستان ٹیم کی کامیابی انضمام الحق اور ان کی سلیکشن کمیٹی کی سب سے بڑی کامیابی تھی۔

امکان ظاہر کیا جارہا ہے کہ اگر پاکستان کی ٹیم رواں ماہ شروع ہونے والے ورلڈکپ میں اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کرتی ہے تو پی سی بی انضمام کو عہدے سے نہ ہٹانے کے دباؤ میں آجائے گا۔اس کے علاوہ ڈان کے علم میں آیا ہے کہ قومی ٹیم کے ہیڈ کوچ مکی آرتھر کو بھی انگلینڈ میں ہونے والے ورلڈ کپ کے بعد عہدے سے فارغ کردیا جائے گا۔

یہ بھی دیکھیں

پاکستان نے نیوزی لینڈ کو آخری ٹی ٹوئنٹی میں شکست دیدی

نیپئر: پاکستان نے تیسرے اور آخری ٹی ٹوئنٹی میچ میں نیوزی لینڈ کو 4 وکٹ …