بدھ , 14 اپریل 2021

شمالی کوریا سے 70 ممالک کا جوہری ہتھیار تلف کرنے کا مطالبہ

پیانگ یانگ (مانیٹرنگ ڈیسک)دنیا کے 70 ممالک نے عالمی امن کو درپیش ’شدید خطرے‘ کے پیش نظر شمالی کوریا سے اپنے جوہری ہتھیار، بیلسٹک میزائل تلف کرنے اور متعلقہ دیگر پروگرام بند کرنے کا مطالبہ کردیا۔غیر ملکی خبر رساں ادارے ’اے ایف پی‘ کے مطابق فرانس کی جانب سے تیار کیے جانے والے مسودے پر امریکا اور جنوبی کوریا کے علاوہ ایشیائی، لاطینی امریکا، افریقہ اور یورپی ممالک نے بھی دستخط کیے۔رپورٹ میں کہا گیا کہ ’روس اور چین نے شمالی کوریا کی حمایت کی اور مسودے پر دستخط نہیں کیے‘۔

واضح رہے کہ شمالی کوریا نے سپریم لیڈر کم جونگ اُن اور امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے درمیان معاہدے کی ناکامی کے احتجاج کے طور پر ایک ہفتے کے دوران کم فاصلے پر ہدف کو نشانہ بنانے والے 2 میزائلوں کے تجربے کیے تھے۔

سفارتی ذرائع کے مطابق شمالی کوریا کی جانب سے میزائل تجربات کے بعد 15 ممالک نے ازخود مسودے پر دستخط کیے۔مشترکہ مسودے میں کہا گیا کہ دستخط کنندگان شمالی کوریا کے جوہری ہتھیار اور بیلسٹک میزائل کو خطے اور عالمی امن کے لیے غیر معمولی خطرہ سمجھتے ہیں۔اس میں کہا گیا کہ ’ہم شمالی کوریا سے مطالبہ کرتے ہیں کہ وہ جوہری عدم پھیلاؤ کے لیے امریکا سے مذاکرات کا سلسلہ جاری رکھے‘۔

خیال رہے کہ شمالی کوریا کے نائب وزیرخارجہ نے امریکا کو خبردار کیا تھا کہ اگر اس نے پیانگ یانگ کی معاشی پابندیوں کو ختم نہ کیا تو غیر متوقع نتائج کا سامنا کرنا پڑے گا۔شمالی کوریا کے ایک تجزیہ کار کا ان تجربوں کے حوالے سے کہنا تھا کہ ‘تازہ تجربوں سے کم جونگ ان کے وعدوں پر کوئی فرق نہیں پڑے گا کیونکہ وعدوں میں وسیع پیمانے پر بلیسٹک میزائل کے تجربے پر خود ساختہ پابندی لگائی گئی ہے’۔

ان کا کہنا تھا کہ ‘تاریخی طور پر دیکھا جائے تو شمالی کوریا نے امریکا سے مذاکرات کے دوران کسی قسم کا کوئی تجربہ نہیں کیا’۔امریکی صدر کا کہنا تھا کہ ’ہم کچھ خاص کرنے کی پوزیشن میں ہیں‘۔دوسری جانب پیانگ یانگ اپنے جوہری پروگرام کو خلیج نما کوریا کی سیکیورٹی کی مضبوط ترین ضمانت کے طور پر دیکھتا ہے۔

یہ بھی دیکھیں

ایران و چین معاہدے پر امریکہ چراغ پا

امریکی صدر نے ایران اور چین کے 25 سالہ معاہدے پر سخت تشویش کا اظہار …