منگل , 13 اپریل 2021

خاتون رپورٹر کا بوسہ لینے پر باکسر کو 4 ماہ معطلی کی سزا

بلغاریہ (مانیٹرنگ ڈیسک)بلغاریہ سے تعلق رکھنے والے باکسر کوبارٹ پلیو کو خاتون صحافی کا بوسہ لینے پر 4 ماہ کے لیے میچ کھیلنے پر پابندی اور ڈھائی ہزار ڈالر کا جرمانہ عائد کردیا گیا۔بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق کیلیفورنیا کے ایتھلیٹک کمیشن (سی ایس اے سی) میں باکسر کوبارٹ کے خاتون رپورٹر جینیفر ریوالو کا بوسہ لینے سے متعلق کیس کی سماعت ہوئی، کمیشن نے فریقین کے بیان سننے کے بعد باکسر پر جولائی تک کھیل میں حصہ لینے پر پابندی عائد کر دی جب کہ انہیں جنسی ہراسانی سے متعلق کلاسز بھی لینا ہوں گی۔ علاوہ ازیں کمیشن نے ہیوی ویٹ باکسر پر ڈھائی ہزار ڈالرز جرمانہ بھی عائد کیا۔

سماعت کے دوران خاتون رپورٹر جینیفر ریوالو نے روتے ہوئے کمیشن کو تصدیقی بیان ریکارڈ کروایا، اس موقع پر باکسر کوبارٹ پلیو نے خاتون رپورٹر سے معذرت بھی کی، سماعت کے دوران باکسر کی گرل فرینڈ اور پاپ گلوکارہ اینڈریا بھی موجود تھیں۔سماعت کے دوران باکسر کے وکیل نے موقف اختیار کیا کہ ان کے موکل نے میچ جیتنے کی خوشی میں جذبات کی رو میں بہتے ہوئے رپورٹر کا بوسہ لیا، سوچے سمجھے بغیر کیے گئے عمل پر باکسر نے معذرت بھی کی ہے جسے کمیشن کو قبول کرنا چاہیئے۔ تاہم کمیشن نے معذرت قبول نہیں کی۔

واضح رہے کہ 27 مقابلوں میں سے صرف ایک فائٹ میں ناکامی کا سامنا کرنے والے بوکارک پلیو نے رواں برس مارچ میں کوسٹا میسا میں ہونے والے ایک میچ میں رومانیہ کے حریف بوگڈن ڈنو کو ناک آوٹ کرنے کے بعد ریوالو کے ساتھ انٹرویو کے دوران ان کا چہرا پکڑ کر زبردستی بوسہ لیا تھا۔

یہ بھی دیکھیں

پاکستان نے نیوزی لینڈ کو آخری ٹی ٹوئنٹی میں شکست دیدی

نیپئر: پاکستان نے تیسرے اور آخری ٹی ٹوئنٹی میچ میں نیوزی لینڈ کو 4 وکٹ …