پیر , 12 اپریل 2021

ایران مخالف بیانات سے ٹرمپ کی بظاہر پسپائی اور نیا ٹوئیٹ

واشنگٹن (مانیٹرنگ ڈیسک)امریکی صدر ٹرمپ نے ایران دشمنی میں دیئے جانے والے بیانات سے پسپائی اختیار کرتے ہوئے ٹوئٹ کیا ہے کہ ہم ٹیلی فون کے پاس بیٹھے ہیں مگر مذاکرات کے بارے میں ایران کی جانب سے اب تک کوئی جواب نہیں ملا ہے۔امریکی صدر ٹرمپ نے پیر کے روز ٹوئٹ کیا ہے کہ بعض ذرائع ابلاغ کے تصور کے برخلاف ہم ایران کے ساتھ مذاکرات کے خواہاں ہیں مگر ہمیں اب تک کوئی جواب نہیں ملا ہے۔

امریکی صدر نے اسی طرح اپنے ٹوئٹ میں فریب کاری کا مظاہرہ کرتے ہوئے گذشتہ دو برس کے دوران ایران کے خلاف امریکہ کے بڑھتے ہوئے دشمنانہ اقدامات کی طرف کوئی اشارہ کئے بغیر کہا ہے کہ انھیں ان دشواریوں پر تشویش ہے جو پابندیوں کی بنا پر ایرانی عوام کے لئے پیدا ہوئی ہیں۔

ایران کے سلسلے میں امریکی صدر ٹرمپ کی بظاہر پسپائی اور تہران کے ساتھ مذاکرات پر یہ تاکید ایسی حالت میں ہے کہ انھوں نے پیر کی صبح بھی ایران کے خلاف لفاظی کرتے ہوئے اپنے ایک ٹوئٹ میں ایران کو جنگ اور اسے نابود کرنے کی دھمکی دی تھی۔

یہ بھی دیکھیں

ایران و چین معاہدے پر امریکہ چراغ پا

امریکی صدر نے ایران اور چین کے 25 سالہ معاہدے پر سخت تشویش کا اظہار …